koh himalya

فضائی آلودگی میں غیرمعمولی کمی،بھارت میں کوہ ہمالیہ ایک پھر توجہ کا مرکز

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

نئی دہلی (جتن آن لائن مانیٹرنگ ڈیسک)فضائی آلودگی کے نتیجے میں برسوں سے بھارت میں کوہ ہمالیہ کی فلک بوس چوٹیوں کو قرب جوار کے مکینوں سے چھپا دیا تھا مگر حالیہ ہفتوں کے دوران کرونا کی وجہ سے ہونے والے لاک ڈائون کا ایک فائدہ یہ ہوا ہے کہ فضائی آلودگی میں غیرمعمولی کمی نے کوہ ہمالیہ کو ایک بار پھر توجہ کا مرکز بنا دیا ہے۔

عرب ٹی وی کے مطابق کوہ ہمالیہ سلسلے میں بھارتی پنجاب کے شہر جالندھر سے 200 کلو میٹر دور مائونٹ ایورسٹ واقع ہے مگر بھارت کی ایک ارب تیس کروڑ کی آبادی گذشتہ 30 برسوں سے کوہ ہمالیہ کی چوٹیوں کے نظاروں سے محروم تھی۔ حالیہ عرصے میں ملک میں ہونے والے لاک ڈائون اور فضائی آلودگی میں کمی نے ہمالیہ کے قابل دید مناظر ایک بار پھرنمایاں کردیے ۔

لوگ کوہ ہمالیہ کے نظاروں سے بہت زیادہ متاثر ہیں اور ایک ان کی تصاویر اور ویڈیوز انٹرنیٹ پر شیئر کر رہا ہے حالانکہ اس سے قبل ہمالیہ کے برہ راست نظاروں کی کوئی صورت نہیں تھی اور لوگ صرف انٹرنیٹ پر اس کی تصاویر دیکھتے تھے۔

بھارت کے سابق کرکٹر ہربھجن سنگھ کا کہنا تھا کہ اس نے اپنے گھر سے پہلی بار کوہ ہمالیہ کا نظارہ کیا۔ آج تک کوہ ہمالیہ کی یہ خوبصورت فضائی آلودگی کی وجہ سے آنکھوں سے اوجھل رہی ہے اور ہم لوگ صرف تصاویر اور ویڈیوز ہی میں ان مقامات کو دیکھ پاتے تھے۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply