شہروں میں لاک ڈائون

کورونا سے مزید81 افراد جاں بحق، مختلف اضلاع میں عائد اضافی پابندیاں ختم کرنے کافیصلہ

Spread the love

عائد اضافی پابندیاں ختم

اسلام آباد، لاہور (جے ٹی این آن لائن نیوز) این سی او سی نے کورونا وبا میں بتدریج کمی کے

رجحان کے مدنظر شدید پھیلا والے اضلاع سے اضافی پابندیاں ہٹانے کا فیصلہ کیا ہے۔ تفصیلات کے

مطابق وفاقی وزیر منصوبہ بندی اسد عمر کی سربراہی میں این سی او سی کا اجلاس ہوا ، جس میں

کورونا وبا کی صورت حال اور اس سے نمٹنے کے لیے حکمت عملی پر غور کیا گیا۔ این سی او سی

نے وبا میں بتدریج کمی کے رجحان کو مدنظر رکھتے ہوئے 22 ستمبر 2021 کے بعد سے شدید پھیلا

والے اضلاع (لاہور ، فیصل آباد ، ملتان ، سرگودھا ، گجرات اور بنوں) سے اضافی پابندیاں ہٹانے کا

فیصلہ کیا ہے۔ تاہم ملک بھر کے لیے عمومی پابندیاں 30 ستمبر 21 تک نافذ رہیں گی، پابندیوں پر

نظر ثانی کے لئے 28 ستمبر کو اجلاس ہوگا۔ این سی او سی کے اعلامیے میں کہا گیا یے کہ ملک

میں روزانہ کی بنیاد پر کورونا کے پھیلا اور صحت کی دیکھ بھال کے نظام کی نگرانی کی جا رہی

ہے، جب بھی بیماری کے پھیلا کو کنٹرول کرنے کی ضرورت پیش آئی تو اس مناسبت سے فیصلے

کیے جائیں گے۔این سی او سی نے مزید کہا ہے کہ کورونا کے خلاف قوت مدافعت بڑھانے والی سائنو

فارم ویکسین کی وافر مقدار میں موجود ہے، عوام بلا تاخیر اپنے قریبی ویکسینیشن سینٹر سے سائنو

فارم ویکسین لگوا کر اپنے ویکسینیشن عمل کو مکمل کر سکتے ہیں۔ واضح رہے کہ ملک میں کورونا

مثبت کیسز کی شرح کم ہوکر 4 فیصد پر آگئی ہے۔دریں اثنا کورونا وائرس سے 81 افراد جاں بحق

ہوگئے، جس کے بعد اموات کی تعداد 27 ہزار 327 ہوگئی۔ پاکستان میں کورونا کے تصدیق شدہ کیسز

کی تعداد 12 لاکھ 27 ہزار 905 ہوگئی۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے تازہ ترین اعدادوشمار کے

مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ایک ہزار 897 نئے کیسز رپورٹ ہوئے، پنجاب میں 4 لاکھ 23

ہزار 670، سندھ میں 4 لاکھ 51 ہزار 448، خیبر پختونخوا میں ایک لاکھ 71 ہزار 589، بلوچستان

میں 32 ہزار 772، گلگت بلتستان میں 10 ہزار 257، اسلام آباد میں ایک لاکھ 4 ہزار 348 جبکہ آزاد

کشمیر میں 33 ہزار 821 کیسز رپورٹ ہوئے، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 46 ہزار 231 نئے ٹیسٹ

کئے گئے، اب تک 11 لاکھ 37 ہزار 656 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں جبکہ 4 ہزار 846 مریضوں

کی حالت تشویشناک ہے۔صوبائی دارالحکومت میں کورونا کا خطرہ برقرار موذی وائرس سے 11

افراد جان کی بازی ہار گئے، 24 گھنٹوں کے دوران 439 نئے کیسز رپورٹ ہوئے اورکورونا مثبت

کیسز کی شرح 7 اعشاریہ 2 فیصد ریکارڈ کی گئی۔ترجمان محکمہ صحت کے مطابق پنجاب بھر میں

کورونا وائرس کے 880 نئے کیسز سامنے آئے، مریضوں کی مجموعی تعداد 4 لاکھ 23 ہزار 671 ہو

گئی۔جبکہ اعداد و شمار کے مطابق اب تک 3 لاکھ 89 ہزار 497 مریض مکمل طور پر صحت یاب ہو

چکے۔ ایکٹیو کیسز کی تعداد 21 ہزار 727 ہو گئی ہے۔محکمہ صحت کا کہناہے کہ پنجاب بھر میں

کورونا سے 42 اموات ہوئیں جس کے بعد کل تعداد 12 ہزار 447 ہو گئی ہیوزارت صحت کی جانب

سے انسداد کورونا کے لئے ویکسین نہ لگوانے والے افراد پر پابندیاں نافذ کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا

جبکہ پابندیوں سے متعلق فہرست بھی جاری کر دی گئی ہے۔ایک رپورٹ کے مطابق وزارت صحت

کا کہنا ہے کہ ویکسینیشن نہ کروانے والوں شہریوں کویکم اکتوبر سے پبلک ٹرانسپورٹ میں سفر

کرنے اور ہوٹلوں میں داخلے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔وزارت صحت کے مطابق غیر ویکسین

شدہ افراد کو ریسٹورنٹس اور شادی ہالوں میں بھی داخلے کی اجازت نہیں دی جائے گی جبکہ ایسے

شہریوں پر سکول، ہوائی سفر اور شاپنگ مالز میں بھی داخلے پر پابندی نافذ ہوگی،واضح رہے کہ اس

سے قبل این سی او سی نے بھی ویکسین نہ لگوانے والے افراد کو وارننگ دی ہے کہ یکم اکتوبرسے

ایسے تمام افراد پہ، جنہوں نے ویکسین نہیں لگوائی ہو گی ، روزمرہ زندگی میں زیر استعمال بہت سی

سہولیات کی بندش کر دی جائے گی۔این سی او سی کا مزید کہنا تھا کہ ویکسی نیشن کا عمل جلد از جلد

مکمل کروایں اور زندگی رواں رکھیں

کورونا ہلاکتیں

عائد اضافی پابندیاں ختم

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply