شہبازشریف اور خاندان کے 9 افراد کے اثاثے منجمد کرنے کا حکم

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

لاہور(جتن آن لائن نیوز رپورٹر) شہباز شریف اثاثے منجمد

احتساب عدالت نے شہبازشریف اوران کے خاندان کے 9 افراد کے اثاثہ جات منجمد کرنے کا حکم دے دیا۔ احتساب عدالت کے جج

چوہدری امیرمحمد خان نے آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں نیب کی درخواست پرمحفوظ فیصلہ سناتے ہوئے شہبازشریف اوران کے

خاندان کے 9 افراد کے اثاثہ جات منجمد کرنے کا حکم دے دیا۔ مزید پڑھیں

شریف خاندان نے منی لانڈرنگ کے ذریعے اربوں کی جائیدادیں بنائیں، نیب

نیب کے اسپیشل پراسکیوٹرحافظ اسد اللہ اعوان نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ شہبازشریف اینڈ فیملی کے خلاف آمدن سے زائد اثاثے

بنانے اورمنی لانڈرنگ کی تحقیقات جاری ہیں، شریف خاندان نے منی لانڈرنگ کے ذریعے اربوں کی جائیدادیں بنا رکھی ہیں، اس لیے

شہبازشریف، ان کی اہلیہ اوربیٹوں کے تمام اثاثے منجمد کیے جائیں۔ نیب کے مطابق سابق وزیراعلی پنجاب شہباز شریف، ان کی بیگمات

اوربیٹوں کے نام پر مختلف مقامات پر 23 جائیدادیں ہیں۔ عدالت کی جانب سے شہباز شریف فیملی کے جن اثاثوں کو منجمد کرنے کا

حکم دیا ہے ان میں 96 ماڈل ٹان اور 87 ایچ کی 10 کنال کی رہائش گاہیں، ڈونگا گلی ایبٹ آباد میں ایک کنال ایک مرلے کے نشاط

لاجز، چنیوٹ انرجی لمیٹڈ، رمضان انرجی، شریف ڈیری اور کرسٹل پلاسٹک انڈسٹری بھی فہرست میں شامل ہیں۔ واضح رہے کہ نیب

لاہور کی جانب سے اثاثہ جات منجمد کرنے کے لیے 15 درخواستیں دائر کی گئی تھیں،ملزمان 14روز میں فیصلے کے خلاف

اعتراضات دائر کرسکتے ہیں- یہ بھی یاد رہے کہ سابق وزیراعلیٰ پنجاب ، صدر مسلم لیگ ن اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر

میاں شہباز شریف آج کل لندن میں اپنے بڑے بھائی قائد مسلم لیگ ن کے علاج معالجہ کی غرض سے لندن میں ہیں- جہاں وہ اپنا بھی

علاج معالجہ کرا رہے ہیں

شہباز شریف اثاثے منجمد

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply