شام میں فوجی سرگرمیاں جاری رکھیں گے،ایران کا اسرائیل کو دو ٹوک جواب

Spread the love

ایران نے شام میں اپنی فوج اور ملیشیائوں کی موجودگی کا دفاع کرتے ہوئے اسرائیل کو باور کرایا ہے کہ ایران شام میں اپنی فوجی سرگرمیاں جاری رکھے گا۔ اگر اس پر صہیونی ریاست کو کوئی اعتراض ہے تو اسے قبول نہیں کیا جا سکتا۔ ایرانی رہبرِ اعلی آیت اللہ علی خامنہ ای کے عسکری مشیر میجر جنرل حسن فیروز آبادی نے کہا کہ شام میں ہماری فوج اور عسکری سرگرمیاں جاری رہیں گی۔ انہوں نے یہ بات اسرائیل کی طرف سے کیے گئے اس دعوے کے بعد کی گئی ہے جس میں صہیونی ریاست نے اعتراف کیا تھا کہ اس نے گذشتہ دو سال کے دوران شام میں ایران کی دسیوں تنصیبات تباہ کی ہیں۔خبر رساں ادارے “ارنا” کے مطابق جنرل فیروز آبادی نے کہا کہ جب تک شام میں دہشت گردی کا خطرہ موجود ہے اس وقت تک ایرانی فوج شام میں موجود رہے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ شام میں ایرانی فوج شامی حکومت کی درخواست پر دمشق کی معاونت کے لیے تعینات کی گئی ہے۔

Leave a Reply