0

سی پیک پر عمل درآمد کےلئے بزنس ایڈوائزری کونسل قائم کرنے کا فیصلہ

Spread the love

وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت اجلاس کے دوران چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبوں (سی پیک) پر عمل درآمد کےلئے سی پیک بزنس ایڈوائزری کونسل قائم کرنےکا فیصلہ کیا گیا ، اس موقع پر انہیں سی پیک منصوبوں میں انڈسڑیل ڈویلپمنٹ اور صنعتی زونز کی تعمیر، ایم ایل ون پراجیکٹ، ایگری کلچر ڈیویلپمنٹ، سوشو اکنامک ڈویلپمنٹ اور گوادر کی تعمیر و ترقی کے امور پر بھی بریفنگ دی گئی۔وزیراعظم نے کہا چیئرمین سرمایہ کاری بورڈ خصوصی اکنامک زونز سے متعلق 4 ہفتوں میں تجاویز دیں، سی پیک منصوبوں کی جلد تکمیل سے معاشی سرگرمیوں اور روزگار میں اضافہ ہوگا۔دریں اثنا وزیراعظم نے عوامی شکایات پر عمل درآمد سے متعلق صوبوں کو احکامات جاری کرتے ہوئے کہا شہریوں کو شکایات کے سلسلے میں ہونےوالی تکلیف پر باقاعدہ معذرت بھی کی جائے۔وزیر اعظم عمران خان سے چودھری غلام حسین اور کمال ناصر نے بھی ملاقات کی جس میں وزیر اعظم کے نیا پاکستان ہاو¿سنگ پراجیکٹ پرتبادلہ خیال کیا گیا ،وزیر اعظم عمران خان سے امریکی ریپبلکن پارٹی کے سرگرم کارکن ساجد تارڑ اور جیسی سنگھ نے بھی پی ایم آفس میں ملاقات کی اور سکھ کمیونٹی کی جانب سے کرتارپورہ کاریڈور کھولنے پر وزیر اعظم کا شکریہ ادا کیا۔بعد ازاں وزیراعظم عمران خان سے اقوام متحدہ کی صدر جنرل اسمبلی ماریہ فرنینڈا پنوسا نے ملاقات کی ،یو این جنر ل اسمبلی کی صدر نے پسماندہ لوگوں کو بااختیار بنانے کےلئے وزیر اعظم کی کوششوں کو سراہا،وزیراعظم نے حکومتی منصوبوں پر صدر اقوام متحدہ جنرل اسمبلی کو بریفنگ دی اور ماریا فرنینڈا کی توجہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم پر دلوائی اور کہا مقبوضہ وادی میں بھارت انسانی حقوق کی خلاف ورزی کر رہا ہے۔اقوام متحدہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم اور تشدد رکوائے۔گستاخانہ خاکوں سے متعلق بھی بات چیت کی اور کہا کہ اس معاملے پر پاکستانیوں میں شدید غم وغصہ پایا جاتا ہے، جنرل اسمبلی کی صدر معاملے پر کردار ادا کریں۔ وزیراعظم نے بین المذاہب ہم آہنگی کی ضرورت پر بھی زور دیا، جبکہ اقوام متحدہ کی صدر نے افغان امن عمل میں پاکستان کی کوششوں کی تعریف کی اور پاکستان کی جانب سے لاکھوں افغان مہاجرین کی مہمان نوازی کو بھی سراہا۔

Leave a Reply