سی پیک شفاف نہیں، چین پاکستان کا قرض معاف یا چُھوٹ دے، امریکہ 84

سی پیک شفاف نہیں، چین پاکستان کا قرض معاف یا چُھوٹ دے، امریکہ

واشنگٹن (جے ٹی این آن لائن خصوصی رپورٹ) سی پیک شفاف نہیں

امریکہ نے چین سے مطالبہ کیا ہے وہ کرونا وائرس کی وجہ سے معاشی مشکل

میں مبتلا پاکستان کا قرضہ معاف کرے یا اس میں چھوٹ دینے کیلئے ازسر نو

مذاکرات کرے۔

—————————————————————————–
یہ بھی پڑھیں : امریکہ چین جنگ کا خطرہ بڑھ گیا، سی آئی جی آئی آر
—————————————————————————–

امریکی نائب معاون وزیر خارجہ ایلس ویلز نے یہ تقاضا گزشتہ شا م یہاں ایک

الوداعی نیوز کانفرنس میں کیا، جو آج جمعہ کے روز سے ریٹائرڈ ہورہی ہیں۔

سی پیک پر امریکہ کو شدید تحفظات ہیں، ایلس ویلز

مس ویلز نے جو چین کی ہمیشہ نقاد رہی ہیں، اس موقع پر ایک بار پھر چین پر

نکتہ چینی کرتے ہوئے کہا اس نے پاکستان کیساتھ اقتصادی راہداری ( سی پیک )

کے جو معاہدے کئے ہیں، ان میں شفافیت کا فقدان ہے، جس کے باعث امریکہ کو

اس پر شدید تحفظات ہیں۔

چین پاکستان کو دیئے گئے غیر منصفانہ قرضوں کا بوجھ کم کرے، ویلز

انہوں نے چین سے مخاطب ہوتے ہوئے کہا کہ کرونا وباء کی وجہ سے پاکستان

بھی معاشی بحران میں مبتلا ہو گیا ہے، اس لئے صورتحال کا تقاضا یہ ہے کہ وہ

پاکستان کو دیئے گئے، غیر منصفانہ قرضوں کا بوجھ کم کرے۔

——————————————————————————
دوستو : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر کریں، فالو کریں اپڈیٹ رہیں
——————————————————————————

یاد رہے کہ اس وقت کرونا وباء سے پیدا ہونیوالے معاشی بوجھ سے نجات کیلئے

پاکستان نے جی ٹونٹی ممالک اور عالمی مالیاتی اداروں سے قرضوں میں چھوٹ

دینے کا مطالبہ کر رکھا ہے۔

کرونا وباء، پاکستان معاشی مشکلات بہانہ، سی پیک اور چین نشانہ، مبصرین

امریکہ سی پیک کے حوالے سے پہلے بھی کئی بار اپنے تحفظات کا اظہار کر

چکا ہے، مگر اس مرتبہ اس کی جانب سے مختلف انداز میں سی پیک کو تنقید کا

نشانہ بنایا گیا ہے- نبصرین اور تجزیہ کار اسے کرونا وباء اور پاکستان کی معاشی

مشکلات بہانہ سی پیک اور چین نشانہ قرار دے رہے ہیں-

سی پیک شفاف نہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں