سی این جی سٹیشنز کی بند ش سے گیس قیمتوں میں مزید اضافہ ہو گا‘غیاث پراچہ

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

لاہو ر(کامرس رپورٹر) آل پاکستان سی این جی ایسوسی ایشن کے مرکزی چیئرمین غیاث پراچہ نے

کہاہے کہ سی این جی اسٹیشنوں کو گیس کی فراہمی کی بندش سرکلر ڈیٹ او رگیس قیمتوں میں اضافے

کا باعث بنتی ہے۔ اس اقدام سے لاکھوں لوگوں کا کاروبار اور روزگار متاثر ہوگا جس سے عوام میں

بے چینی اور بے یقینی پھیلے گی۔ اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہاکہ پنجاب کے سی این جی ا سٹیشنز

سستی قدرتی گیس چھوڑ کر مہنگی آر ایل این جی پر اس لئے منتقل ہوئے کیونکہ انھیں یقین دلایا گیا تھا

کہ اسکی سپلائی کبھی منقطع نہیں ہوگی اسی لئے پنجاب کے 1100اسٹیشنوں نے اپنے سیکیورٹی

ڈپازٹ کے علاوہ علیحدہ سے 12 لاکھ روپے فی کس حکومت پاکستان کو بطور ایڈوانس ادائیگی کی

تاکہ آر ایل این جی کی خریداری میں کوئی رکاوٹ نہ آئے اور کاروبار چلتا رہے لیکن اربوں روپے کی

پیشگی ادائیگی کے باوجود سی این جی اسٹیشنوں کو گیس سے محروم کیا جارہا ہے ۔ لوکل گیس سندھ

کی اپنی پیداوار ہے اس لئے وہاں سی این جی سیکٹر کیلئے گیس سپلائی کی بندش ناانصافی ہے اس

سے کاروباری حلقوں میں شدید بے چینی اور اضطراب پھیل رہا ہے۔ دوسری جانب گیس کی بندش سے

ملکی معیشت کو شدید نقصان پہنچ رہا ہے۔ سی این جی بند ہونے پر مہنگی امپورٹڈ گیس گھریلو

صارفین اور سستے ٹیرف لینے والے سیکٹرز کو فراہم ہو جاتی ہے جس سے اربوں روپوں کا سرکلر

ڈیٹ بن جاتا ہے، اس نقصان کو پورا کرنے کے لئے حکومت اگلی ششماہی کیلئے پورے ملک کی گیس

کے ریٹ میں اضافہ کر دیتی ہے ، جس کے ملکی معیشت پر انتہائی منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں، عوام

کو گیس کی زیادہ قیمت چکانی پڑتی ہے ، ٹرانسپورٹ کے کرائے بڑھ جاتے ہیں اور مہنگائی میں

اضافہ ہو جاتا ہے اور لاکھوں افراد کا کاروبار متاثر ہوتاہے ۔ مزید برآں شہروں میں سموگ کے حوالے

سے وزیر اعظم کے اعلان کے برعکس فضائی آلودگی میں کمی کے بجائے اضافہ ہو سکتا ہے۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply