سیاحوں سے بدسلُوکی، مشیر خلیق الرحمن کا ایکشن، ایکسائز سکواڈ ہزارہ معطل

سیاحوں سے بدسلُوکی، مشیر خلیق الرحمن کا ایکشن، ایکسائز سکواڈ ہزارہ معطل

Spread the love

پشاور( بیورورچیف، عمران رشید) سیاحوں سے بدسلُوکی

Journalist Imran Rasheed

مشیر وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا برائے محکمہ ایکسائز، ٹیکسیشن و نارکوٹکس

کنٹرول خلیق الرحمن نے دوسرے صوبوں سے خیبر پختونخوا میں سیاحت کیلئے

آنیوالے سیاحوں سے ناروا سلوک وغیر قانونی طور بلا وجہ تنگ کرنے پر سخت

ایکشن لیتے ہوئے ایکسائز سکواڈ ہزارہ ریجن کو معطل کر کے ان کیخلاف

انکوائری کے احکامات جاری کر دئیے، جبکہ مشیر ایکسائز کے ہدایت پر ڈی جی

ایکسائز نے سکواڈ کے تمام عملے سے سرکاری گاڑیاں فوری طور پر وئیر ہاؤس

میں جمع کرنے کے تحریری احکامات جاری کردئیے۔

=-،-= خیبر پختونخوا سے متعلق مزید خبریں (=-= پڑھیں =-=)

تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز مشیر برائے محکمہ ایکسائز، ٹیکسیشن و

نارکوٹکس کنٹرول خیبر پختونخوا خلیق الرحمن نیشنل تھرو بال چمپئین شپ کی

تقریب میں شرکت کیلئے ناران جارہے تھے انہوں نے بالاکوٹ بائی پاس کے قریب

ایکسائز سکواڈ ای آئی بی۔3 کو چیک کیا تو سکواڈ کے عملہ دیگر صوبوں سے

آنیوالے سیاحوں کو روک کر ان کے سامان کھول کر بلا وجہ تلاشی لے رہا تھا۔

اس موقع پر مشیر ایکسائز و ٹیکسیشن خلیق الرحمن نے سکواڈ انچارج اے ایس آئی

سردار عبدالمجید سے کاروائی کے حوالے سے باز پرس کی تو وہ جواب نہ دے

سکیں۔ جس پر فوری ایکشن لیتے ہوئے ڈائریکٹر جنرل محکمہ ایکسائز کو فوری

طور پر متعلقہ سکواڈ کیخلاف کارروائی کی ہدایت کی۔ اس موقع پر مشیر ایکسائز

و ٹیکسیشن خلیق الرحمن نے سیاحوں کے پاس جا کر انہیں ناران کی جانب

رخصت کیا اور واقعے پر متعلقہ اہلکاروں کیخلاف سخت کارروائی کے احکامات

جاری کر دئیے۔ ڈی ایکسائز نے فوری طور پر مذکورہ اہلکاروں کو معطل کرنے

اور ان سے سرکاری گاڑیاں وئیر ہاﺅس میں جمع کرنے کے احکامات جاری کر

دئیے۔ ڈی جی ایکسائز نے ایکسائزو ٹیکسیشن آفیسر مسعود الحق کی سربراہی میں

انکوائری کمیٹی بنا کر متعلقہ واقعے کی رپورٹ پانچ روز میں طلب کر لی۔

=-،-= پڑھیں، جینٹری تعاون نہیں بحث کرتی ہے، ایکسائز ایس آئی نسیم خان

مشیر برائے محکمہ ایکسائز، ٹیکسیشن و نارکوٹکس کنٹرول خلیق الرحمن نے میڈیا

سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت سیاحت کے فروغ کے لئے کام کر رہی

ہے اور بعض عناصر اپنے مذموم مقاصد کے حصول کے لئے حکومتی احکامات

کو ہوا میں اڑا رہے ہیں۔ صوبہ خیبر پختونخوا کے جس علاقے اور خاص کر

سیاحت کے لئے مخصوص مقامات کے حوالے سے کسی قسم کی شکایت موصول

ہوئی تو ایسے عناصر کیخلاف فوری طور پر سخت ایکشن لیا جائیگا۔ سیاح ہمارے

مہمان ہیں اور ان کی میزبانی کرنا ہمارا معاشرتی و اخلاقی فریضہ ہے۔ انکوائری

میں ملوث ہونے والے تمام عناصر کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائیگی۔

سیاحوں سے بدسلُوکی ، سیاحوں سے بدسلُوکی ، سیاحوں سے بدسلُوکی ، سیاحوں سے بدسلُوکی

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply