پنجاب کے سہولت بازار زحمت بن گئے

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

سہولت بازار زحمت

لاہور(جے ٹی این آن لائن نیوز) صوبائی دارالحکومت سمیت صوبہ بھر میں لگائے گئے سہولت بازار

عوام کو مہنگائی کے بھنور سے نہ نکال سکے ،بازاروں میں چینی،چھوٹے بڑے گوشت کے سٹال

خا لی جبکہ سٹالوں پر مذکورہ اشیاءکی فراہمی کو یقینی نہیں بنایا جا سکا. لاہور کے ساٹھ فیصد

سہولت بازاروں میں گھی اور آئل بھی موجود نہیں ۔ فروٹ کے ریٹ عام مارکیٹ کے برابر یا اس

سے مہنگے ہیں جبکہ سبزیاں درجہ سوم کی فروخت ہو رہی ہیں، شکایت کے ازالے کےلئے

بازاروں میں عملہ موجود نہیں جبکہ دیگر شہروں میں لگائے گئے سہولت بازار صرف سبزی اور

پھل تک محدود ہیں اور ان بازاروں میں ا نتظا میہ کی جانب سے ر یٹ لسٹیں بھی آویزاں نہیں ۔یہ

انکشافات مانیٹرنگ والے اداروں کی طرف سے وزیر اعلیٰ پنجاب کو بھجوائی گئی رپور ٹس میں کیا

گیا ہے، جن کے مطابق پنجاب کے اسی فیصد شہروں میں لگائے گئے سہولت بازاروں میں مکمل

سہولیات فراہم نہیں کیں گئیں ، ا ور زیادہ تر بازاروں میں ریٹ لسٹیں بھی آویزاں نہیں کی گئیں جبکہ

بازاروں میں موجود اشیاءکے ریٹ عام بازاروں سے زیادہ ہیں ۔درجہ سوم کے سبزی و پھل بازاروں

میں فروخت کےلئے رکھے گئے ہیں جن کے ریٹ عام مارکیٹ سے پانچ تا سات روپے کم ہیں۔لاہور

کے حوا لے سے رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ شہر کے سب سہولت بازاروں میں اکثریت کے اندر

چینی ،بیف اور مٹن کی موجودگی کو یقینی نہیں بنایا جا سکا ان کے سٹا لوں میں سبزی و پھل زیادہ

فروخت کئے جا رہے ہیں جبکہ آئل ،گھی و آٹا بھی دستیاب نہیں ہے ۔ رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے

کہ بعض سستے بازاروں میں ٹماٹر دو سو روپے بک رہا ہے جبکہ بازاروں میں سیب کا ریٹ ستر

سے نوے روپے کلو ہے جبکہ ان بازاروں میں سو تا ایک سو دس روپے بیچا جا رہا ہے۔اسی طرح

آلو ساٹھ روپے مارکیٹ سے دستیاب ہے جبکہ ان بازاروں میں دوم درجہ کا آلو اٹھاون روپے میں

دستیاب ہے

سہولت بازار زحمت

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply