سعودی عرب، سیکیورٹی اہلکار کے قتل میں ملوث داعشی کا سر قلم

Spread the love

سعودی عرب سیکیورٹی اہلکار

ریاض (جے ٹی این آن لائن نیوز) سعودی عرب کی وزارت داخلہ نے کہا ہے کہ ایک سیکیورٹی

اہلکار کے قتل میں ملوث داعشی جنگجو کو سنائی گئی سزا پر عمل درآمد کرتے ہوئے جدہ میں مجرم

کا سرقلم کر دیا گیا۔میڈیارپورٹس کے مطابق وزارت داخلہ کے بیان میں کہا گیا کہ مکہ معظمہ کے

علاقے جدہ گورنری میں ایک سیکیورٹی اہلکار کے قتل میں ملوث مصر سے تعلق رکھنے والے ولید

سامی الزھیری کا 23 شوال کو سر قلم کردیا گیا۔سزاپانے والے داعشی نے کچھ عرصہ قبل جدہ میں

ایک پٹرول پمپ پر نماز فجر ادا کرنے میں مصروف سیکیورٹی اہلکار ھادی بن مسفر القحطانی کو قتل

کردیا تھا۔بیان میں کہا گیا کہ مجرم نے سیکیورٹی اہلکار کو نماز میں تنہا پا کرموقعے سے فایدہ اٹھایا

اور نماز کے دوران اس پرچاقو سے وار کرکے اسے قتل کردیا تھا۔کارروائی کے بعد مجرم جائے

وقوعہ سے فرار ہوگیا تھا تاہم سیکیورٹی اہلکاروں نے تعاقب کرکے اسے گرفتار کرلیا۔ اس نے عدالت

کے سامنے جرم کا اعتراف کرنے کے ساتھ داعش کے ساتھ اپنے تعلق کا اعتراف کیا تھا۔

سعودی عرب سیکیورٹی اہلکار

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply