0

سانحہ ماڈل ٹاﺅن، مدعی سمیت 30 گواہوں کے بیانات قلمبند

Spread the love

سانحہ ماڈل ٹاﺅن کی تحقیقات کیلئے بنائی گئی نئی جے آئی ٹی نے سانحہ کے مدعی سمیت 30 گواہوں کے بیانات قلمبند کرلیے،عوامی تحریک کے ذرائع کے مطابق بیانات قلمبند کرنے کا یہ سلسلہ ابھی جاری ہے ، ہفتے میں چار دن ان کے گواہوں کے بیانات قلمبند کئے جارہے ہیں، گواہوں کو بیانات ریکارڈ کروانے کا مکمل موقع دیا جارہا ہے اور ان پرکسی قسم کا کوئی دباﺅ نہیں ڈالاجارہا ہے، جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہونیوالے زیادہ ترگواہوں نے سابق ایس پی عمر ورک ، معروف صفدر واہلہ، عبدالرحیم شیرازی اور سلیمان کےخلاف گواہی دی ہے، گواہان نے بیان قلمبند کروایا کہ پولیس افسران نے نہتے لوگوں کا قتل عام کیا گیا
ادھرترجمان عوامی تحریک نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ نئی جے آئی ٹی نے پہلی بارجائے وقوعہ کا فرانزک سروے کیا ہے ، ٹیم ممبران مسلسل چار روزتک جائے وقوعہ کا مختلف پہلووں سے سروے کرتے رہے ہیں۔ امید ہے سانحہ کے متاثرین کو انصاف ملے گا اور قاتل کیفرکردارتک پہنچیں گے،واضح رہے سربراہ عوامی تحریک ڈ ا کٹرطاہرالقادری بھی نئی جے آئی ٹی کواپنا بیان ریکارڈکرواچکے ہیں جبکہ جے آئی ٹی نے سابق وزیرقانون پنجاب رانا ثنا اللہ کو طلب کررکھا ہے۔

Leave a Reply