ریٹائرڈ ڈرائیورز کو دوبارہ ریلوے میں رکھنے پر غورکر رہے ہیں،شیخ رشید

Spread the love

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) ریلوے نے محکمے کے ریٹائرڈ ڈرائیورز کو دوبارہ

نوکری پر رکھنے کے لیے غور شروع کردیا۔ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ ایک

سالہ رپورٹ آنے پر مخالفین دنگ رہ جائیں گے،گزشتہ ایک سال میں ریلوے نے

تاریخ میں سب سے زیادہ کمائی کی،نئی چلائی جانے والی 10ٹرینیں منافع میں جا

رہی ہیں،امیر قطر کے دورے کے بعد افغانستان کے صدر اشرف غنی بھی جلد

پاکستان آئیں گے اور تمام ریلوے لائنز پر بات چیت ہو گی، جنہوں نے نواز شریف

کو گرایا وہ حمزہ اور شہباز کو بھی اندر کرنا چاہتے ہیں،میں تو کہتا ہوں نواز

شریف لندن جانا چاہتے ہیں تو جانے دیں۔وہ پیر کو پارلیمنٹ ہائوس کے باہر میڈیا

سے گفتگو کررہے تھے۔ وزیراعظم کی ہدایت پر لاہور، سرگودھا ٹریک کو

میانوالی تک لے جا رہے ہیں، ایک شخص مدثر نے مفت ریلوے ٹریکر سسٹم فراہم

کیا ہے، جب تک ایم ایل ون مکمل نہیں ہو گا ڈی ریلنگ کا خطرہ موجود رہے گا،

نئی چلائی جانے والی 10ٹرینیں منافع میں جا رہی ہیں،17لاکھ لیٹر تیل بچایا ہے،

ایم ایل ون کا معاہدہ 14سال پہلے کیا تھا، آج ریلوے میں 10دن کے ایندھن کا سٹاک

رکھا گیا ہے، ایک سالہ رپورٹ آنے پر مخالفین دنگ رہ جائیں گے، وزیراعظم

3جولائی کو سرسید ایکسپریس کا افتتاح کریں گے، پشاور سے قندھار تک ریلوے

ٹریک کو بحال کرنے کا منصوبہ بھی زیر غور ہے،میری اور شہباز شریف کی

مادر پارٹی ایک ہی ہے۔ انہوں نے کہا ن لیگ میں ایک شہباز لیگ دوسری نواز

لیگ ہے، 126 دن بیٹھنا ان کے بس کی بات نہیں، خورشید نے کہا اے پی سی میں

مولانا کو سمجھائیں گے، منتخب شخص کو سلیکٹڈ کہنا نا انصافی ہے۔چیئرمین اسد

جونیجو کی زیرصدارت سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے ریلوے کا اجلاس ہواجس

میں ریلوے حکام نے جناح ایکسپریس اور سکھر ریلوے حادثے پر حکام کو

بریفنگ دی جب کہ وزیر ریلوے شیخ رشید بھی قائمہ کمیٹی میں پیش ہوئے۔جناح

ایکسپریس حادثے پر ریلوے حکام نے بتایا کہ خراب سگنلز سے پہلے رپیٹر سگنل

اشارہ دے رہا تھا، جناح ایکسپریس کے ڈرائیور نے سگنل کو نظر انداز کیا،

ڈرائیور ٹرین 50 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلا رہا تھا جب کہ اسٹیشن پر

رفتار15 کلومیٹرفی گھنٹہ ہونی چاہیے اس لیے بظاہر ذمہ دار ٹرین ڈرائیور ہی ہے۔

ریلوے کے ریٹائرڈ ڈرائیورز کو دوبارہ رکھنے پر غور کررہے ہیں، ریٹائرڈ

ڈرائیور کی بھرتیوں کیلئے وزیراعظم سے اجازت لیں گے۔شیخ رشید کی تجویز پر

چیئرمین کمیٹی نے کہا کہ ریٹائرڈ ڈرائیورز کو ٹرین کیسے دوبارہ چلانے دیں

گے، ریٹائرڈ ڈرائیورز سے ٹرینیں دوبارہ چلوانا خطرناک ہے۔ریلوے کی

کارکردگی پر وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ 24 اگست کو ریلوے کی کارکردگی پوری

قوم کے سامنے لاؤں گا، ڈالرمہنگا ہونے سے پرزوں کی خریداری کی مد میں بھی

اخراجات میں اضافے کا سامنا ہے، گالف سٹی کیس جیت گئے تو ریلوے اپنے

پیروں پر کھڑا ہوجائیگا، خودکار کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم پر کام شروع کردیا ہے،

اس سسٹم سے ٹرین کی ٹریکنگ میں آسانی ہوگی، سگنلز اور لائنوں کی مرمت

کے بعد انجنوں کی تبدیلی پر غور کریں گے۔

Leave a Reply