وزیر اعظم نے ریلیف نہیں تکلیف پیکیج کا اعلان کیا،اپوزیشن

Spread the love

ریلیف نہیں تکلیف پیکیج

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن نیوز) چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ وزیر

اعظم نے لالی پاپ پیکج کا اعلان کیا یہ ریلیف پیکج عوام کے لیے نہیں بلکہ چند خاندانوں کے لیے

ہے۔چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے وزیر اعظم کے خطاب پر ردعمل میں کہا کہ پیپلز

پارٹی کے مہنگائی کے خلاف احتجاج نے وزیر اعظم کو خطاب کرنے پر مجبور کیا لیکن عوام 30

فیصد کے ریلیف کا کیا کریں گے؟پاکستان تحریک انصاف والے نالائق اور جھوٹے ہیں اور یہ ریلیف

کے نام پر تکلیف دیتے ہیں۔ عمران خان آج بھی اپنی ناکامیوں کا ملبہ پچھلی حکومتوں پر ڈال رہے

ہیں۔بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ عوام کو اب لالی پاپ نہیں بلکہ عمران خان سے حساب چاہیے اور

عمران خان کے خطاب کا نتیجہ بھی گزشتہ اعلانات سے مختلف نہیں ہو گا۔عمران خان نے کسی

ریلیف پیکج کا نہیں بلکہ ایک لالی پاپ پیکج کا اعلان کیا ہے اور عمران خان کا ریلیف پیکج عوام کے

لیے نہیں بلکہ چند خاندانوں کے لیے ہے۔ حکومت پر تنقید کرتے ہوئے چیئرمین پیپلز پارٹی نے کہا کہ

ایمنسٹی اسکیموں کا اعلان کرنے والی حکومت کے پاس عوام کے لیے کوئی منصوبہ نہیں ہے جبکہ

عمران خان جھوٹ بولنے والے اور وعدہ خلافی کرنے والے وزیر اعظم ہیں اگر ملک کو بچانا اور

معاشی بحران سے نکالنا ہے تو عوام کو جیالوں کی حکومت بنانا ہو گی۔پاکستان مسلم لیگ (ن) کی

ترجمان مریم اورنگزیب نے مطالبہ کیا ہے کہ وزیراعظم عمران خان فراڈ پیکج کا اعلان کرنے پر

استعفی دیدیں۔ وزیر اعظم کے خطاب پر ردعمل دیتے ہوئے مریم اورنگزیب نے کہا عمران خان نے

ریلیف پیکج نہیں تکلیف پیکج کا اعلان کیا ہے۔عمران صاحب کا تکلیف پیکج پسی عوام کے لئے

مہنگائی کا نیا تباہ کن طوفان ہوگا ۔عمران صاحب نے ریلیف پیکج نہیں بلکہ مزید مہنگائی ، بے

روزگاری اور معاشی تباہی کا باضابطہ اعلان کیا ہے ۔مہنگائی کی سونامی کا باضابطہ اعلان کرنے

کے بجائے ناکام، نااہل اور کرپٹ عمران خان استعفی دینے کا اعلان کرتے۔ انہوں نے کہا ثابت ہوگیا

کہ اب صرف عمران صاحب کا استعفی ہی مہنگائی کی ستائی عوام کے لئے سب سے بڑا ریلیف پیکج

ہوگا ۔انہوں نے کہا اگلے چھ ماہ مزید مہنگائی، بے روزگاری اورمعاشی تباہی بڑھے گی، یہ ریلیف

پیکج ہے؟ ۔آٹا، چینی، بجلی، گیس، کپاس، پٹرول مزید مہنگے ہوں گے، یہ ہے آپ کا ریلیف پیکج ؟ ۔

بجلی گیس کی قیمت مزید بڑھے گی اور بجلی گیس ملے گی بھی نہیں، واہ عمران صاحب کیا پیکج دیا

ہے؟ ۔دوسروں کی کرپشن کی جھوٹی کہانیاں پٹ چکیں، مسلم لیگ (ن) کی قیادت چالیس سال کا حساب

دے چکی ہے ۔مریم اورنگزیب نے کہا پاکستان سے لے کر برطانیہ کی عدالتوں، چالیس سال کے

عرصے کی عالمی تحقیق سے عمران صاحب پوری دنیا میں جھوٹے ثابت ہوچکے ہیں ۔عمران

صاحب آپ توشہ خان سے چوری کئے ہوئے تین کلو سونے، ہیرے کے سیٹ اور تین قیمتی گھڑیوں

کا حساب دیں ۔عمران صاحب اگر تین سال میں عوام کا آٹا چینی بجلی گیس دوائی چوری کا لوٹا ہوا

پیسہ سرکاری خزانے میں جمع کروا دیں تو مہنگائی بے روزگاری اور معاشی تباہی ختم ہو جائے گی

۔عمران صاحب آپ کچھ نہ کریں صرف استعفیٰ کا اعلان کریں آٹا چینی گھی بجلی گیس دوائی سب کی

قیمتیں کم ہو جائیں گی ۔عمران صاحب کا ریلیف پیکج کا اعلان ایک کڑوڑ نوکری ، پچاس لاکھ گھر

اور آئی ایم نہیں جاؤں گا جیسا ہے عوام سب جانتی ہے۔ پاکستان پیپلز پارٹی کی نائب صدرسینیٹر

شیری رحمان نے وزیراعظم کے خطاب پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ خطاب سے لگ رہا ہے کہ

عمران خان آج حکومت سنبھالنے جا رہے ہیں ، 3 سال بعد بھی پرانے وعدے کئے جا رہے ہیں ،22

کروڑ پاکستانی ریلیف کے منتظر ہیں، 2 کروڑ نہیں،وزیراعظم نے آج اپنی ناکامیوں کی ذمہ داری

اپوزیشن پر نہیں عالمی دنیا پر ڈال دی، شیری رحمان نے کہا کہ سبسڈی دینے سے مہنگائی کم ہوتی

تو چینی 120 روپے کلو نا ہوتی،وزیر اعظم بنی گالا کی خوشحالی بتا رہے تھے، ملک کی صورتحال

تشویش ناک ہے،مہنگائی خطاب سے نہیں، کارکردگی سے کم ہوگی،انہوں نے کہا کہ لوگوں کا جینا

مشکل ہو گیا ہے اور آپ 3 سال بعد بھی سنہری خواب دکھا رہے، 17 بار نوٹس لینے کے بعد بھی آپ

مہنگائی کم نہیں کر سکے،کیا چینی 120 روپے فی کلو ہونے کی ذمہ دار بھی عالمی منڈی ہے؟ کیا

بجلی اور گیس کی قیمت کی ذمہ دار بھی عالمی دنیا ہے؟ حکومت آج بھی ذمہ داری لینے کو تیار

نہیں، پی ڈی ایم و جمعیت علماء اسلام کے رہنما حافظ حمد اﷲ کا کہنا تھا کہ ملک میں تباہی کی وجہ

وزیراعظم کوویڈ 19کو بتاتے ہیں لیکن انہیں اصل بات بتانی چاہیے کہ ملک میں مہنگائی کی اصل

وجہ کورونا 19 نہیں بلکہ کورونا 18ہے جس میں وزیراعظم کورونا بن کر قوم پر مسلط ہوئے۔ انہوں

نے کہا کہ وزیراعظم نے انڈیا، بنگلہ دیش، سری لنکا کی مثالیں دیں لیکن یہ نہیں بتایا کہ وہاں کے

عوام کی فی کس اوسط آمدنی کتنی ہے اور پاکستانی عوام کی کتنی ہے، اس وقت چالیس سال سے

برباد افغانستان کی معاشی حالت پاکستان سے بہتر ہے۔

ریلیف نہیں تکلیف پیکیج

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply