این سی اے فیصلے پر حکومتی صفوں میں کہرام مچ گیا ہے. شہباز شریف

Spread the love

حکومتی صفوں میں کہرام

لاہور (جے ٹی این آن لائن نیوز) پاکستان مسلم لیگ نون کے صدر شہباز شریف نے کہا ہے کہ

نیشنل کرائم ایجنسی کے فیصلے پر حکوتی صفوں میں کہرام ہے، مجھے اور پارٹی ارکان کو جیل

بھجوایا گیا، کیا نکلا ؟ سب نے صریحا جھوٹ بولا، سوا تین سال میں طوفان بدتمیزی مچا رہا، اربوں

کے الزامات لگے، نیب، ایف آئی اے کو ایک دھیلے کی کرپشن کا ثبوت نہیں ملا، اب حقائق پوری قوم

کے سامنے آچکے ہیں، ملتان میٹرو کی پوری چھان بین کی گئی، وزرا دن رات ٹی وی پر بے بنیاد

الزامات لگاتے رہے، ڈیلی میل میں میرے خلاف اسٹوری چھپوائی گئی۔ بدھ کو مسلم لیگ (ن) کے

رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے مسلم لیگ نون کے صدر و قائد حزب اختلاف میاں

شہباز شریف نے کہا ہے کہ عزت اور ذلت اﷲ کے ہاتھ میں ہے، 3سالوں سے میرے خاندان کے

خلاف طوفان بدتمیزی برپا ہے، بے بنیاد الزامات لگائے گئے، تین سالوں میں دو دفعہ جیل گیا،فیصلہ

آنے سے حکومتی صفوں میں طوفان مچا ہوا ہے، دن رات بیٹھ کر جھوٹے الزامات لگا رہے ہیں،

حکومت کی طرف سے لگائے گئے الزامات میں اب تک کون سا ایک الزام ثابت ہوا، عمران نیازی

نیب گٹھ جوڑ نے ملتان میٹرو کی مکمل چھان بین کی، ایک دھیلے کی کرپشن نہ ملی، الزام تھا کہ رقم

لے کر آف شور کمپنیوں میں جمع کروائی، اس کی چینی سفارتخانے نے بھی تردید کی، 2006 میں

آنے والے زلزلے کے فنڈز کھانے کے بھی الزامات لگے، میں اس وقت جلاوطن تھا، اس فنڈ سے میرا

کوئی تعلق نہیں،مجھے میرے دور حکومت میں فنڈ کی خردبرد کا الزام لگا لیکن کچھ ثابت نہ ہوا،

پنجاب میں دس سال عوام کی خدمت کی، نیب اور ایف آئی اے کی طرف سے اربوں کھربوں کرپشن

کے الزامات لگے لیکن ایک دھیلے کی کرپشن ثابت نہیں کر سکے، ڈیلی میل میں خبر چھپوائی

ڈیوڈروز کا معاملہ ناکام ہوا تو میرے بچوں کے خلاف این سی اے کے پاس چلے گئے، میرے اور

میرے خاندان کے خلاف کچھ ثابت نہیں ہوا،ویسٹ مجسٹریٹ کے فیصلے سے حکومت کو آگ لگی

ہوئی ہے، یہ قوم کو دھوکہ دینے کیلئے جھوٹے الزامات لگا رہے ہیں، برطانیہ کے ویسٹ مجسٹریٹ

کے فیصلے میں میرا واضح ذکر ہے، کارروائی این سی اے نے نہیں ایسٹ ریکوری یونٹ کے کہنے

پر شروع ہوئی، حکومتی زعماء صرف جھوٹ بولتے رہے، حقائق عوام کے سامنے ہیں، نیب نیازی

گٹھ جوڑ کے حوالے سے کوئی دورائے نہیں، این سی اے نے مدد نہیں مانگی تھی حکومت نے خط

لکھا تھا، فیصلے میں کئی جگہ میرا ذکر ہے،یہ کہتے ہیں شہباز شریف کا کہیں ذکر نہیں،اگر میری

دولت سے میرے بچوں نے فائدہ اٹھایا، میرا بیٹا بری ہو گیا لیکن میں بری نہیں ہوا، یہ تو لطیفہ ہی ہو

گیا، جھوٹ بولنا اس حکومت کی عادت ہے،برطانیہ میں جھوٹ کا ڈنڈا نہیں چلتا وہاں قانون کی

حکمرانی ہے۔ 9 دسمبر 2019 کو این سی اے حکام کی شہزاد سلیم سے ملاقات ہوئی۔

حکومتی صفوں میں کہرام

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply