حسن روحانی کا عمران خان سے ٹیلی فونک رابطہ، دوطرفہ تعلقات مستحکم بنانے پراتفاق

Spread the love

اسلام آباد(صباح نیوز)ایرانی صدر حسن روحانی نے وزیر اعظم عمران خان

کوٹیلی فون کیا جس میں علاقائی امن و استحکام کیلئے تعاون کی مزید

سازگارفضاء کیلئے باہمی مضبوط تعلقات کی اہمیت پر زور دیا اور ایران کے

موجودہ پاک بھارت صورتحال میں بہتری کے کردار کی اہمیت سے آگا ہ ہیں۔

عمران خان نے ایران کاجموں وکشمیر کی مسلسل حمایت پر شکریہ بھی ادا کیا۔

دونوں رہنمائوں نے دہشت گردی کے خاتمے کیلئے دونوں ممالک کے خفیہ

اداروں کے درمیان قریبی تعاون اور روابطوں پر اتفاق کیا جبکہ مضبوط دوطرفہ

تعلقات کی اہمیت کا اعادہ کیا۔

وزیراعظم عمران خان کے مستقبل قریب میں دورہ ایران پر بات چیت کی گئی

وزیراعظم نے ایران میں حالیہ دہشت گرد حملے جس میں 27 ایرانی گارڈز

جاںبحق ہو نے پر بھی گہرے دکھ اور افسوس کااظہار کیا جبکہ ایرانی صدر کو

پاک بھارت کشیدگی اور موجودہ صورتحال پر اعتماد میں لیا اور کہا مذاکرات

کیلئے پاکستان موجودہ صورتحال میں بہتری کی کاوشیں کر رہا ہے۔ہم بھارت

کے ساتھ تعلقات بہتر بنانا چاہتے ہیں۔انہوں نے برادر اسلامی ملک ایران کے

موجودہ پاک بھارت صورتحال میں بہتری کے لیے بھی کردار پر بھی اظہار خیال

کیا۔ ایرانی صدر روحانی نے کہا پاکستان اور ایران نا صرف دو پڑوسی اسلامی

ملک ہیں بلکہ ان میں گہرے قریبی تاریخی،ثقافتی اورعوامی رابطے موجود ہیں۔

عوامی رابطوں کا فروغ خطے میں امن ،استحکام اور معاشی ترقی کے لیے

انتہائی اہم ہے۔

Leave a Reply