جیسنڈا تو سامراج کے سامنے جھک گئیں، اصل دُکھ اپنوں کا طنز

جیسنڈا تو سامراج کے سامنے جھک گئیں، اصل دُکھ اپنوں کا طنز

Spread the love

(تجزیہ:– ابو رجا حیدر) جیسنڈا تو سامراج

tanvir babar

جیسنڈا نے نیوزی لینڈ میں سانحہ کرائسٹ چرچ میں مسلمانوں کے قتل عام پر

جہاں اپنے مثبت کردار سے کروڑوں مسلمانوں کے دل جیت لئے تھے، وہیں

گزشتہ روز سامراجی قوتوں کے سامنے جھک کر وہی جیتی بازی اس وقت ہار

گئیں جب انہوں نے بلاوجہ پاکستان اور اپنے ملک کی کرکٹ ٹیم کے مابین ونڈے

سیریز کو منسوخ کر دی۔ اگرچہ پاکستانی ان کی اس غیر اخلاقی حرکت کو کبھی

نہیں بھولیں گے۔ تاہم اہل وطن تیار رہیں کہ پاکستان کیخلاف سازش کی تکمیل

کیلئے ابھی انگلینڈ کا بھی پاک سرزمین پر آ کر کرکٹ سیریز کھیلنے سے انکار

سامنے آنا باقی ہے- مگر اصل دُکھ یہ ہے کہ نیوزی لینڈ کے دورے سے فرار

کے بعد ہمارے ہی کچھ سیاسی لوگوں نے وطن دشمنوں کی سازش کی کامیابی پر

اپنے ہی ملک اور حکومت پر طنز اور خوشی بھرے ٹوئٹ کئے، جو شرم کا مقام

ہے، کیونکہ یہ دھرتی سب کی ماں ہے اور ماں کو عزت دینی چاہئے۔ اہل وطن

یقینا اس کا بھی نوٹس لیں گے اور احتساب یقینی بنائیں گے-

=یہ بھی پڑھیں= شاہین کی 10 نمبر شرٹ سے جان چھوٹ گئی،

اگر کوئی یہ سمجھتا کہ یہ پاکستان کرکٹ پر دہشت گردانہ حملہ ہے تو ایسا نہیں

ہے، بلکہ دراصل یہ افغانستان میں پاکستانی ایجنسیوں کے ہاتھوں ذلیل و رسواء

ہونے والے بھارت اور تاریخی طور پر مسلمہ ناقابل تسخیر افغان سرزمین میں دو

دہائیوں تک ایڑی چوٹی کا زور لگانے کے باوجود شکست و ریخت سے دو چار

امریکہ کا غصہ ہے، اور یہ دونوں ممالک اپنی شکست و ہزیمت کا بدلہ پاکستان

کے اداروں سے لینا چاہتے ہیں، یہ دونوں ممالک اور ان کے اتحادی مزید بھی

بہت کچھ کرسکتے ہیں۔ جس کیلئے ہمیں من حیث القوم تیار رہنا اور وطن عزیز

کی شان و شوکت میں اضافے کیلئے کام کرنا ہے، چاند پر تھونکنے سے اپنا ہی

منہ گندا ہوتا ہے، جو ان سامراجی قوتوں نے کر لیا، کیونکہ پاکستانی سکیورٹی

ایجنسیوں کی ساکھ، قابلیت اور کارکردگی کی پوری دنیا معترف ہے، اس طرح

کی بھونڈی حرکتوں کا مطلب فقط اپنی خفت مٹانے کے اور کچھ نہیں-

=–= کھیل و کھلاڑی سے متعلق مزید خبریں ( =–= پڑھیں =–= )

اس میں کوئی شک نہیں کہ پاکستانی کرکٹ بورڈ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل میں

بھارت کے سامنے بہت کمزور ہے، لیکن یہ بھی ایک حقیقت ہے کہ ہمارے میدان

اجاڑے جانے کے باوجود ہم کرکٹ کے ہر فارمیٹ میں نمبرون بنے، نیوزی لینڈ

کے بعد اگر انگلینڈ، آسڑیلیا بھی سازش کا حصہ بنتے ہوئے پاکستان نہیں آتے تو

ان کے ان اقدامات کو جوتے کی نوک پر رکھا جائے اور انہیں ان کی اوقات

دکھانے کے لئے اتنا ہی کافی ہے کہ انہیں نظر انداز کر دیا جائے۔ ہماری تجویز

ہے کہ کرکٹ بورڈ قومی ٹیم کو دو حصوں میں تقسیم کر کے یعنی دو ٹیمیں بنا کر

پاکستان کے تمام شہروں میں نمائشی میچ کرائے، تاکہ دنیا کو معلوم ہو جائے ہم

زندہ قوم ہیں، پائندہ قوم ہیں-

جیسنڈا تو سامراج ، جیسنڈا تو سامراج ، جیسنڈا تو سامراج ، جیسنڈا تو سامراج

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply