جہانگیر ترین مقدمہ درج

جہانگیر ترین 12ارکان قومی وصوبائی اسمبلی، 3 مشیروں کیساتھ بینکنگ کورٹ پیش

Spread the love

جہانگیر ترین بینکنگ کورٹ

لاہور (جے ٹی این آن لائن نیوز) بینکنگ کورٹ نے جہانگیر ترین اور علی ترین کی ضمانت

میں10اپریل تک توسیع کرتے ہوئے ایف آئی اے کو گرفتاری سے روک دیا۔ بدھ کو بینکنگ کورٹ

نے منی لانڈرنگ کیس کی سماعت کی جس میں جہانگیر ترین ،ان کے بیٹے علی ترین کے علاوہ

عامر وارث،رانا نسیم عدالت میں پیش ہوئے ۔ بینکنگ کورٹ نے جہانگیر ترین اور علی ترین ،عامر

وارث اور رانا نسیم کی عبوری ضمانت میں 10اپریل تک توسیع کر دی۔بینکنگ کورٹ کے جج امیر

محمد خان کے رخصت پر ہونے کے باعث کیس میں مزید پیش رفت نہ ہو سکی ۔ بینکنگ کورٹ میں

پیشی کے موقع پر 3اراکین قومی اسمبلی، 9اراکین صوبائی اسمبلی اور تین مشیر جہانگیر خان ترین

کے ہمراہ اظہار یکجہتی کیلئے آئے ۔ ارا کین قومی و صوبائی اسمبلی کا تعلق فیصل آباد، جھنگ،

ملتان، مظفر گڑھ، لیہ، سرگودھا اور خوشاب سے ہے، ان میں ایم این اے غلام بی بی بھروانہ، غلام

احمد لالی، راجہ ریاض، صوبائی وزیر نعمان لنگڑیال بھی جہانگیرترین کیساتھ تھے۔ اراکین صوبائی

اسمبلی میں زوار وڑائچ، نذیر بلوچ، اسلم بھروانہ، طاہر رندھاوا، چوہدری افتخار گوندل، غلام رسول

سنگھا، سلمان نعیم او ر ٹکٹ ہولڈر جاد وڑائچ شامل تھے،اظہار یکجہتی کیلئے آنیوالوں میں تین مشیر

عبدالحئی دستی، امیر محمد خان اور سابق مشیر خرم لغاری شامل تھے۔ عدالت کے باہر کارکنان نے

جہانگیر ترین کے حق میں نعرے بازی اور گل پاشی کی ، جہانگیر ترین کی پیشی سے پہلے ان کی

رہائشگاہ پراراکین اسمبلی اوررہنماں کی بیٹھک بھی ہوئی۔

جہانگیر ترین بینکنگ کورٹ

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply