new zara meri bhi suno1

تنزانیہ میں کرونا ہے نہیں تو ویکسین استعمال کیوں کریں؟، صدر جان موگوفلی

Spread the love

ڈوڈوما (جے ٹی این آن لائن ذرا میری بھی سنو) تنزانیہ میں کرونا

افریقی ملک تنزانیہ کی حکومت نے کرونا ویکسین استعمال کرنے سے انکار

کرتے ہوئے کہا ہے جب ان کے ملک میں کرونا ہے ہی نہیں تو وہ ویکسین کا

استعمال کیوں کریں؟۔ تفصیلات کے مطابق تنزانیہ کے صدر جان موگوفلی نے

ایک بار پھر کرونا سے تحفظ کی ویکسین کو استعمال کرنے سے انکار کرتے

ہوئے اس کے اثر پر شکوک و شبہات کا اظہار بھی کیا۔ جان موگوفلی نے عوامی

جلسے میں ماسک کے بغیر خطاب میں کہا ان کے ملک سمیت خطے کو خدا ہی

بچا سکتا ہے۔ جان موگوفلی کے جلسے میں آنیوالے تمام افراد فیس ماسک اور

سماجی فاصلوں کے بغیر تھے اور تنزانیہ کی حکومت نے کرونا وائرس سے تحفظ

کیلئے کسی طرح کی سختیوں کا نفاذ بھی نہیں کیا۔

=یہ بھی پڑھیں= کرونا لاک ڈاؤن کرنیوالے ممالک پاگل، صدر بیلا روس

عالمی ادارہ صحت نے دو دن قبل ہی تنزانیہ کی حکومت پر زور دیا تھا کہ وہ نہ

صرف کرونا سے تحفظ کیلئے اقدامات کرے بلکہ کرونا کی ویکسین کو حاصل

کرنے کیلئے بھی سنجیدگی سےاقدامات اٹھائے۔ عالمی ادارہ صحت سمیت دیگر

عالمی تنظیموں اور امیر ممالک کی مخالفت اور امیر ممالک کی جانب سے تنزانیہ

پر بعض پابندیاں عائد کیے جانے کے باوجود وہاں کی حکومت کرونا سے متعلق

کسی طرح کے اقدامات نہیں کر رہی۔ تنزانیہ کے صدر جان موگوفلی نے جون

2020ء میں ہی دعویٰ کیا تھا ان کا ملک کرونا سے پاک ہو چکا، جان موگوفلی نے

جون میں دعویٰ کیا تھا کہ حکومتی کوششوں، عوام کی دعاﺅں اور خدا کی کرم

نوازی کے باعث ان کا ملک کرونا سے پاک ہو گیا اور تنزانین حکومت نے جون

سے کرونا کے اعداد و شمار جاری کرنا بند کردیئے تھے۔

=—–= قارئین =-: ہماری کاوش پسند آئی ہو گی،اپ ڈیٹ رہنے کیلئے ہمیں فالو کریں

تنزانیہ میں کرونا

Leave a Reply