بیٹی کی موج مستی پر بارک اوبامہ ہدف تنقید

Spread the love

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) فلاحی کاموں اوراہلیہ مشعل اوبامہ سے اظہار محبت کے باعث شہہ سرخیوں میں رہنے والے سابق امریکی صدر باراک اوباما ان دنوں ان اپنی 20 سالہ بیٹی مالیہ اوباما کی ’میامی بیچ‘ پر موج مستی کرنے پر تنقید کی زد میں ہیں.

برطانوی اخبار “دی گارجین “کے مطابقہ یہ سوال بھی اٹھایا جا رہا ہے یونیورسٹی کی طالبات کے پاس اتنی رقم کہاں سے آئی کہ وہ اس مقام پر چھٹیاں گزارنے پہنچیں جہاں ماہانہ کروڑوں ڈالرز کمانے والی اداکارائیں وقت گزارتی ہیں۔

برطانوی اخبار کا اپنی رپورٹ میں بتانا سابق امریکی صدر باراک اوباما کی 20 سالہ بیٹی مالیہ اوباما کو چند دن قبل فلوریڈا کے میامی بیچ پر اپنی کلاس فیلوز کے ساتھ دیکھا گیا۔

ایک اور برطانوی اخبار کی رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے گارجین کا کہنا تھا مالیہ اوباما کی متعدد تصاویر بھی شائع کی گئیں۔ان تصاویر میں مالیہ اوباما کو اپنی سہیلیوں کے ساتھ ساحل پر مختصر لباس میں چھٹیاں مناتے ہوئے دکھایا گیا تھا۔

تصاویر میں سابق امریکی صدر کی بیٹی کو سہیلیوں کے ساتھ نہ صرف مختصر لباس میں دیکھا گیا بلکہ ان کے ہاتھ میں شراب کی بوتل بھی تھی۔

رپورٹ میں بتایا گیا اگرچہ مالیہ اوباما 20 برس کی ہوچکی ہیں، تاہم امریکی قانون کے مطابق ابھی ان کی عمر شراب نوشی کی نہیں ہوئی۔

ساتھ ہی سوال اٹھایا گیا ہے مالیہ اوباما جس جگہ چھٹیاں منانے گئیں وہاں ایک رات کا کرایہ کم از کم ایک ہزار امریکی ڈالر ہے اور اس جگہ کارڈیشن فیملی اور برٹنی اسپیئر جیسی امیر اداکارائیں ٹھہرتی ہیں۔

مالیہ اوباما کی تصاویر سامنے آنے کے بعد امریکی سوشل میڈیا پر انہیں تنقید کا نشانہ بنایا۔ خیال رہے صدارت کا وقت ختم ہونے کے بعد باراک اوباما اپنے خاندان سمیت بیٹیوں کی تعلیم کے لیے سستے گھر میں منتقل ہوگئے تھے۔

ان کی بیٹی مالیہ اوباما ہارورڈ یونیورسٹی میں زیر تعلیم ہیں، جبکہ ان کی چھوٹی بیٹی 18 سالہ ساشا اوباما بھی ہائی سکول میں زیر تعلیم ہیں۔

Leave a Reply