oh my God jtn-online

بیٹی سے زیادتی کا مقدمہ درج کروانے آئے باپ سے تھانے کی صفائی

Spread the love

قصور(جے ٹی این آن لائن او مائی گاڈ) بیٹی سے زیادتی مقدمہ

پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کے بلند و بانگ دعووں کے باوجود ملک کے

سب سے بڑے صوبے پنجاب کی پولیس کے کرتوت نہیں بدلے، دنیا بدل گئی لیکن

پنجاب پولیس جوں کی توں ہے، سنگدل پولیس افسر نے بیٹی سے زیادتی کا مقدمہ

درج کروانے کیلئے تھانے آئے مظلوم باپ کو صفائی پر لگا دیا۔

=-.-= او مائی گاڈ عنوان کے تحت مزید معلوماتی نیوز ( == پڑھیں == )

تفصیلات کے مطابق یوں تو پی ٹی آئی حکومت بار بار پولیس کے نظام میں

اصلاحات لانے کا دعویٰ کرتی ہے، لیکن آئے روز پنجاب پولیس کی جانب سے

عوام کی تذلیل کیے جانے کا کوئی نہ کوئی واقعہ سامنے آتا رہتا ہے۔ اب پنجاب

کے ضلع قصور میں پیش آئے ایک واقعے کی ویڈیو سامنے آئی ہے جس نے عوام

کو شدید غم و غصے میں مبتلا کر دیا۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق قصور میں پولیس

افسر کی جانب سے شکایت لے کر آنے والے شہری کے ساتھ افسوسناک رویہ

اپنایا گیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ چند روز قبل قصور کی رہائشی 16 لڑکی کو اغوا کر

کے زیادتی کیا نشانہ بنایا گیا تھا۔ واقعہ کا مقدمہ تھانہ منڈی عثمان والہ میں درج

ہے۔ جہاں ملزمان کی گرفتاری کے لیے لڑکی کا باپ مسلسل چکر لگاتا رہا۔ تفتیشی

افسر اے ایس آئی عرفان کو بھاری رشوت بھی کھلا چکا ہے تاہم ان کی شکایت پر

مقدمہ درج نہیں کیا گیا۔

=-= قارئین کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

بیٹی کے لیے انصاف مانگنے آنے والے باپ کو عرفان نے تھانے میں اپنے کمرے

کے فرش کو دھونے پر لگا دیا۔ مجبور باپ پولیس افسر کو خوش کرنے کے لیے

صفائی پر لگ گیا۔ تاہم اس واقعے کی ویڈیو بن گئی جو سوشل میڈیا پر وائرل ہے۔

ویڈیو سامنے آنے پر ڈی پی او قصور نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے اے ایس ائی

عرفان کو معطل کر دیا اور انکوائری کا حکم جاری کیا۔ یاد رہے کہ اس سے قبل

قصور میں پولیس اہلکاروں نے گھر میں گھس کر خاتون کو تشدد کا نشانہ بنا ڈالا

تھا۔ اس واقعے میں قصور پولیس کا سب انسپکٹر جمیل خان ملوث تھے۔

بیٹی سے زیادتی مقدمہ

Leave a Reply