بیل آئوٹ پیکیج نہ مل سکا،حکومت کا439یو ٹیلیٹی سٹورز بند کرنے کافیصلہ ملازمین کی احتجاج کی دھمکی

Spread the love

موجودہ حکومت کے یو ٹیلیٹی اسٹورز کا رپوریشن کے ساتھ کیے گئے وعدے کے مطابق 14 ارب کے بیل آ ئوٹ پیکیج دینے کے بجائے پاکستان بھر میں زیادہ نقصان پہنچانے والے 439یو ٹیلیٹی اسٹورز بند کرنے کے فیصلے نے یو ٹیلیٹی اسٹور ملازمین کی مشکلات میں اضافہ کر دیاہے،ان یو ٹیلیٹی اسٹور ز پر کام کرنے والے 12سو سے زائد ملازمین کا مستقبل دائو پر لگ گیا، ملازمین نے احتجاج کی تیاریاں شروع کردی ہیں۔تفصیلات کے مطابق موجودہ حکومت نے یوٹیلیٹی اسٹورز کو مکمل طور پر ختم کرنے کا فیصلہ کیا تو یوٹیلیٹی اسٹور ملازمین کی جانب سے احتجاجی مظاہرے کیے گئے جس پر حکومت نے اپنا فیصلہ واپس لے لیا اور یو ٹیلیٹی اسٹور کارپوریشن کو 14ارب کا بیل آ ئوٹ پیکیج دینے کا فیصلہ کیا جس پر ملا زمین کی جانب سے احتجاج ختم کر دیا گیا لیکن کئی ماہ گزر جانے کے بعد بھی بیل آ ئوٹ پیکیج کی رقم کی ادائیگی نہ ہو سکی جس پر یوٹیلیٹی اسٹورز کے حالات مزید خراب ہو تے گئے ، اب 439یوٹیلیٹی اسٹورز بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے جس پر 1200سے زائد ملازمین کا مستقبل دائو پر لگ گیا، ملازمین نے احتجاج کی تیاریاں شروع کردی ہیں۔

Leave a Reply