0

بھوک مٹانے کیلئے شوہربیوی کو قتل کر کے کھا گیا

Spread the love

کتا کان لے اڑا والی بات تو سب جانتے ہونگے لیکن اس پر دھیان کوئی کوئی ہی دیتا ہے ،ہم مسلمانوں کی بھی کچھ یہی صورتحال ہے کہ سنی سنا ئی باتوں پریقین کر لیتے ہیں تحقیق کی زحمت گوارہ ہی نہیں کرتے ،ایسا ہی کچھ گزشتہ روز صیہونی میڈیا نے جعلی و من گھڑت خبر سوشل میڈیا پروائرل کی کہ ایک سعودی شخص اپنی چار بیویوں کیساتھ صحراءمیں بھٹک گیا اور جب بھوک لگی تو اپنی 2 بیویوں کا گوشت ہی کھا گیا، یہ خبر سا منے آنا تھی کہ سوشل میڈیا پر ایک طوفان برپا ہو گیا اور دیکھتے ہی دیکھتے یہ خبر کروڑوں لوگوں تک جا پہنچی۔رپورٹ کے مطابق 41 سالہ مصطفی علی حماد اپنی چار بیویوں کیساتھ صحراءسے گزر رہا تھا ریت کے طوفان میں پھنس کر راستہ بھٹک گیا اور پھر حادثہ پیش آ گیا جس کے باعث اس کی ایک بیوی موقع پر ہی جاں بحق ہو گئی۔تین روز تک وہ صحراءکی تپتی دھوپ میں بغیر پانی اور خوراک کے بھٹکتے رہے اور پھر حماد نے اپنی دو بیویوں کو مدد کی تلاش کیلئے بھیج دیا۔ دونوں خواتین صحراءمیں بھٹکتی بالآخر ایک گاﺅں میں پہنچ گئیں اور جب مدد لے کر پہنچیں تو تمام لوگ دیکھ کر حیران رہ گئے صرف حماد ہی زندہ جبکہ اسکی دو بیویاں ہلاک ہو چکی تھیں اور وہ زندہ رہنے کیلئے انکا گوشت کھاتا رہا،بعدازاں ایک انٹرویو میںحماد نے ایک انٹرویو میں کہا اس کمزور لمحے میں وہ اپنی بیویوں کا گوشت کھا گیا کیونکہ خود پر قابو نہیں رکھ پایا ، امید ہے اللہ اسے معاف کر دے گا،میری بیویاں نیک مسلمان تھیں مجھے یقین ہے ان کا گوشت بھی حلال تھا۔افسوس اس جعلی خبر کو بغیر تصدیق لوگوں نے آگے پھیلانا شر وع کر دیا۔جے ٹی این آن لائن کی سوشل میڈیا صارفین سے گزارش ہے کسی بھی خبر کو بغیر تحقیق و تصدیق پھیلانے سے اجتناب کریں۔

Leave a Reply