بھارتی منصوبہ سامنے آنے کے بعد پوری وادی لاک ڈائون ہو گئی ہے ،امریکی میڈیا

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک )ایمنسٹی انٹرنیشنل انڈیا نے خبردار کیا ہے نئی دہلی کی

جانب سے(خطے)کے اسٹیک ہولڈرز سے مشاورت کے بغیر مقبوضہ کشمیر کی

خصوصی حیثیت کو ختم کرنے کا فیصلہ اور شہریوں کے حقوق کو مکمل طور پر

معطل کرنا’ خطے میں کشیدگی میں اضافے کا باعث بن سکتا ہے۔دوسری طرف

امریکی میڈیا نے کہا ہے کہ بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کی حیثیت کی

تبدیلی کے بھارتی منصوبے کے سامنے آنے کے بعد پوری وادی لاک ڈائون ہو

گئی ہے ۔ سی این این نے اپنی رپورٹ میں کہا کہ سوموار کے دن مقبوضہ کشمیر

لاکھوں بھارتی فوجیوں کی تعیناتی کی وجہ سے لاک ڈائون ہو گیا جو کہ پہلے بھی

سب سے زیادہ فوج میں گھرا علاقہ ہے ۔ معروف و ممتاز سیاسی رہنمائوں کو

پہلے ہی نظر بند کر دیا گیا جبکہ بھارت نے مقبوضہ کشمیر کی جغرافیائی حیثیت

میں تبدیلی کا اعلان کر دیا ۔ اس کے باعث وہاں غیر اعلانیہ کرفیو نافذ کرکے ہر

قسم کی سہولیات معطل کردی گئیں ۔ علاقے میں بڑے پیمانے پر مواصلاتی بلیک

آئوٹ ہوا ۔رپورٹ میں کہا گیا کہ کشمیر پہلے ہی دنیا کا انتہائی خطرناک فلیش

پوائنٹ ہے ۔ یہ گزشتہ 70 سالوں سے متشدد علاقائی جدوجہد کا مرکز بھی ہے ۔

Leave a Reply

%d bloggers like this: