بورس جانسن کا کرونا مریضوں کیلئے، پیوٹن کا شہریوں کیلئے بڑا اعلان

بورس جانسن کا کرونا مریضوں کیلئے، پیوٹن کا شہریوں کیلئے بڑا اعلان

Spread the love

لندن، ماسکو، بیجنگ (جے ٹی این آن لائن نیوز) بورس جانسن پیوٹن اعلان

برطانوی وزیراعظم بورس جانسن نے کرونا مریضوں کے علاج کیلئے گولیاں یا

کیپسول بنانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا مریضوں کا علاج گھر پر ہی کیا جا سکے

گا۔ ٹیسٹنگ اور ویکسین کے بعد اینٹی وائرل دوا کرونا وائرس کیخلاف جنگ میں

دفاع کا تیسرا طریقہ ہو گا۔ کرونا مریضوں کو علاج کیلئے گولیاں یا کیپسول موسم

خزاں تک فراہم کرنے کی امید ہے۔ اس کام کیلئے اینٹی وائرل ٹاسک فورس بنائی

جا رہی ہے، اینٹی وائرل دوا بننے کی صورت میں وائرس کی شدت کم ہونے کی

توقع ہے۔

=-= روسی شہریوں کے اخراجات کیلئے 20 فیصد رقم واپسی کے پروگرام میں توسیع

دوسری طرف روسی صدر ولادیمر پیوٹن نے شہریوں کے اخراجات کیلئے 20

فیصد رقم واپسی کا پروگرام 2021ء کے آخر بڑھانے کا عندیہ دیدیا۔ میڈیا رپورٹس

کے مطابق روسی صدر پیوٹن نے اسمبلی سے خطاب کرتے ہوئے حکام کو سفر

کے دوران آنیوالے اخراجات کا 20 فیصد واپس کرنے کا حکم جاری کرتے ہوئے

کہ شہریوں کے اخراجات کیلئے 20 فیصد رقم کی واپسی کے پروگرام کو رواں

برس کے آخر تک بڑھایا جاسکتا ہے۔ زیادہ سے زیادہ لوگ سیر تفریح کیلئے

مراکز میں اپنی حفظان صحت کا خیال رکھیں، حکومت روس کے دوروں پر 20

فیصد اخراجات کی واپسی پر غور کررہی ہے۔

=-= چین کا امسال 3 ارب سے زائد کرونا ویکسینز تیار کرنے کا اعلان

ریاستی کونسل کے نوول کرونا وائرس کیخلاف مشترکہ روک تھام اور کنٹرول

حکمت عملی کے تحت کام کرنیوالے ورکنگ گروپ کے سربراہ ژینگ ژونگ وی

نے کہا کہ چین متوقع طور پر رواں سال نوول کرونا وائرس ویکسین کی 3 ارب

سے زیادہ خوراکیں تیار کرے گا۔ ملک کی موجودہ پیداواری صلاحیت سالانہ لگ

بھگ 5 ارب ویکسین کی خوراکیں ہیں۔ بو آ فورم برائے ایشیا کی سالانہ کانفرنس

کے ذیلی فورم سے خطاب کرتے ہوئے ژینگ نے کہا جب وبا کا پھیلاؤ شروع ہوا

تو چین نے فوری طور پر کرونا وائرس کیلئے ویکسین کی تحقیق اور تیاری پر

توجہ دی۔ چین نے ملک بھر کے 10 تحقیقی یونٹس سے 12 اقسام کی ویکسینز پر

تحقیقی کام کرنے کا انتخاب کیا۔ چین 2021 کے دوسرے حصے میں عالمی سطح

پر مزید ویکسینیز فراہم کریگا۔

=-= چینی ویکسین پر تازہ ترین تحقیق حوصلہ افزا ہے، ماہرصحت

چین کے ایک ماہر صحت نے کہا ہے چلی کے صحت حکام کی جانب سے چین

کی کوویڈ-19 ویکسین سائنوویک کے حوالے سے گزشتہ ہفتے جاری کردہ تحقیقی

اعدادوشمار انتہائی مثبت اور حوصلہ افزا ہیں جن میں ویکسین کی اعلی افادیت کو

ظاہر کیا گیا ہے۔ تحقیقی اعداد و شمارسے ظاہر ہوتا ہے کہ سائنوویک ویکسین

کوویڈ ۔19 کی روک تھام میں 67 فیصد اور اموات روکنے میں 80 فیصد موثر رہی

ہے۔ امراض پر قابوپانے اور روک تھام کے چینی مرکز کے ماہر شا یی منگ نے

کا مزید کہنا تھا ویکسین انفیکشن کی روک تھام کیساتھ ہسپتال میں داخلے سے بچاؤ

شدید بیماری اور اموات کیخلاف انتہائی موثر ثابت ہوئی ہے۔ چلی میں ہونیوالی اس

تحقیق میں ایک کروڑ سے زیادہ افراد کو شامل کیا گیا اور یہ اب تک کی سب سے

بڑی اور سب سے وسیع تحقیق ہے۔

بورس جانسن پیوٹن اعلان

=–= کرونا وائرس سے متعلق خبریں ( =–= پڑھیں =–= )
=قارئین=ہماری کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply