boon cancer

بلڈ کے بون کینسر پر ریسرچ، مالٹا میں مقیم پاکستانی طالبہ آمنہ خان کا اعزاز

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

چنیوٹ (جے ٹی این آن لائن ہیلتھ نیوز) بلڈ بون کینسر ریسرچ

مالٹا میں مقیم پاکستانی نوجوان طالبہ آمنہ خان نے پاکستان کا نام روشن کردیا، آمنہ

خان مالٹا میں پہلی پاکستانی طالبہ ہیں جس نے بون کینسر پر ریسرچ کا اعزاز

حاصل کرکے ملک و قوم کا سرفخر سے بلند کردیا ہے اس سے پہلے وہ بلڈ کینسر

پر ریسرچ کر چکی ہیں جس کے بہت اچھے رزلٹس آرہے ہیں اور اس نے بون

کینسر کیلئے وہی ٹریٹمنٹ استعمال کی ہے اس سے بھی خاطر خواہ نتائج حاصل

ہورہے ہیں- آمنہ خان کی اس کامیابی پر مالٹا کے صدر جارج ویلا نے اس سے

ملاقات کی اور اس کی کاوشوں کو سراہا-

===-: آمنہ خان نے صدر جارج ویلا کو بون کینسر کی ریسرچ پر بریفنگ

آمنہ خان نے صدر جارج ویلا کو بون کینسر کی ریسرچ کے بارے میں مفصل

بریفنگ دی اور اپنی ریسرچ بک کی ایک کاپی صدر جارج ویلا کو تحفے میں دی-

جارج ویلا صدر مالٹا نے کہا کہ جب وہ پڑھتے تھے اس وقت کینسر کا علاج

ممکن نہیں تھا جس کی وجہ سے بہت سے افراد کی موت ہو جاتی تھی اب ان

ریسرچ اور ادویات کی وجہ سے کافی حد تک لوگ صحتیاب ہو ریے ہیں- آمنہ

خان نے صدر مالٹا جارج ویلا کو بتایا کہ جس چیز پر وہ ریسرچ کررہی ہیں اس

طریقہ علاج سے نیچرل طورپر علاج ممکن ہو سکے گا اور اس طریقہ علاج سے

صحت مند ہڈیوں کو نقصان نہیں ہوگا بلکہ صرف کینسر کو ختم کیا جا سکے گا-

===-: قرآن کریم اور حدیث سے متاثر ہو کر ریسرچ شروع کی، آمنہ خان

دوران بریفنگ آمنہ خان نے صدر جارج ویلا کو بتایا کہ اس نے قرآن کریم اور

حدیث سے متاثر ہو کر اس ریسرچ کو شروع کیا اور اپنی ریسرچ کی کتاب میں

قرآن کریم کی وہ آیت اور حدیث کا بھی حوالہ دیا ہے جس کو پڑھ کر صدرجارج

ویلا نے پاکستانی طالبہ آمنہ خان کی کامیابی پر اسے مبارکباد دی اور اس کی

کاوشوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ آپ پاکستانی ہیں اور مالٹا میں آکر نیک کام کر

رہی ہیں اور انسانیت کی خدمت میں حصہ لے رہی ہیں جس سے پوری انسانیت کو

فائدہ ہوگا، بلا شبہ آمنہ خان نے دیارِغیر میں رہتے ہوئے دنیا میں وطن عزیز کا نام

روشن کیا ہے۔

== قارئین =-: ہماری کاوش پسند آئی ہو گی،اپ ڈیٹ رہنے کیلئے ہمیں فالوکریں
ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )

بلڈ بون کینسر ریسرچ

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply