کرونا وبا، طبی عملہ، مریضوں کا بغیر وضو نماز پڑھنا جائزقرار

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

مکہ مکرمہ(جے ٹی این آن لائن) بغیر وضو نماز جائز

سعودی عرب کی فتویٰ کمیٹی کی جانب سے تازہ ترین فتویٰ دیا گیا ہے کہ طبی

عملہ ( ڈاکٹرز، نرسیں، پیرامیڈیکل سٹاف دیگر عملہ اور مریض) کرونا کی وباء

کے باعث بغیر وضو کیے بھی نماز ادا کر سکتے ہیں، کیونکہ موجود حالات میں

شریعت اس کی گنجائش دیتی ہے-

——————————————————————————
یہ بھی پڑھیں : ہنگامی حالات میں باجماعت نمازیں منسوخ کرنا غیرشرعی نہیں، جامعہ الازہر
——————————————————————————

تفصیلات کے مطابق سعودی عرب کی قومی فتویٰ کمیٹی کے مفتی اعظم شیخ عبدالعزیز الشیخ کی سربراہی میں گزشتہ روز ہونے والے ایک اہم اجلاس میں متفقہ طور پر یہ فتویٰ جاری کیا گیا ہے کہ ہنگامی یا خصوصی حالات کے پیش نظر ڈاکٹرز اور نرسوں کو بغیر وضو کے نماز ادا کرنے کی اجازت ہے، یا پھر اپنے حفاظتی لباس پر تیمم کر لیں تو بھی ان کی نماز ہو جائے گی۔

وضو کیلئے حفاظتی لباس اتارنے سے وباء کا شکار ہونے کا خدشہ
——————————————————————————-

فتویٰ میں کہا گیا ہے کہ کیونکہ کرونا کی وبا کے باعث وضو کی خاطر اپنا حفاظتی لباس اتارنے سے ڈاکٹرز کے اس وبا سے متاثر ہونے کا خدشہ پیدا ہو سکتا ہے۔ اس لیے انہیں وضو کے بغیر بھی نماز کی اجازت ہو گی یا پھر حفاظتی لباس پر تیمم کر لینا بھی کافی ہو گا۔

مریض تیمم بھی نہ کرنا چاہیں تو شریعت اجازت دیتی ہے
—————————————————————————–

سعودی عرب کی قومی فتویٰ کمیٹی نے اپنے فتوے میں یہ بھی کہا ہے کہ کرونا کے مریض اگر تیمم بھی نہ کرنا چاہیں تو انہیں اس کی شرعی اجازت ہو گی۔ کیونکہ ایسا ہو سکتا ہے کہ تیمم کیلئے استعمال کی جانیوالی مٹی بھی جراثیم سے بھری ہو، جس سے مریضوں کو نقصان بھی ہو سکتا ہے۔

——————————————————————————
دوستو : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر کریں، فالو کریں اپڈیٹ رہیں
——————————————————————————

بغیر وضو نماز جائز

Leave a Reply