بجلی کا بحران شدید، شارٹ فال 5000میگا واٹ تک پہنچ گیا

Spread the love

بجلی کا بحران شدی

لاہور ، اسلام آباد(جے ٹی این آن لائن نیوز) ملک بھر میں بجلی بحران کی

صورتحال سنگین ہوگئی ،مجموعی شارٹ فال 5000میگا واٹ تک پہنچ گیا متعدد

علاقوں میں رات او ردن کو غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کی جاتی رہی اور عوام

سراپا احتجاج ہیں تاہم وزارت توانائی دعوے کررہی ہے کہ شارٹ فال 1500 میگا

واٹ ہے اور لوڈشیڈنگ بھی کم ہورہی ہے۔پاور ڈویژن ذرائع نے بتایاکہ ملک میں

اس وقت بجلی کی مجموعی پیداوار 19 ہزارمیگاواٹ اور طلب 24 ہزار میگاواٹ

ہے اور ملک بھرمیں 8 گھنٹے تک بجلی کی لوڈشیڈنگ کی جارہی ہے، بجلی کی

تقسیم کارکمپنیوں کا سسٹم اوورلوڈڈ ہے، 80 فیصد ٹرانسفارمراوورلوڈڈ ہیں، طلب

بڑھنے کے باعث فیڈرزٹرپ کررہے ہیں۔دوسری جانب ترجمان وزارت توانائی کا

کہنا ہے کہ کم پانی کے اخراج کی وجہ سے تربیلااورمنگلا سے اس وقت 3300

میگاواٹ کم بجلی پیدا ہو رہی ہے، ملک کی کل بجلی کی ڈیمانڈ 24100 میگاواٹ

، سسٹم میں موجود پیداوار 22600 میگاواٹ ہے، تقسیم کار کمپنیوں کو نظام بہتر

بنانے کی ہدایات جاری کردی گئی ہیں، بجلی کی پیداوار آنے والے دنوں میں بڑھ

جائےگی، بجلی صارفین سے عارضی طور پر لوڈ مینجمنٹ پرمعذرت خواہ ہیں،

اور گزارش کرتے ہیں بجلی استعمال میں اعتدال اپنائیں۔ دوسری طرف ۔لیسکو

ریجن میں بجلی کی طلب 5ہزار میگاواٹ سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ شارٹ

فال 500 میگاواٹ تک پہنچ گیا ،شہری علاقوں میں بجلی کی 6 سے 8 گھنٹے

غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ اور دیہاتوں میں کئی کئی گھنٹے بجلی بند رہنے لگی ہے

جبکہ پوش علاقے لوڈشیڈنگ سے مکمل طور پر محفوظ ہیں۔ بجلی کی بندش اور

ٹرپنگ سے گھریلو صارفین سمیت کاروباری افراد شدید کرب میں مبتلا ہو کر رہ

گئے۔ این پی پی سی کی جانب لیسکو کو 4150 میگا واٹ بجلی فراہم کی جا رہی

ہے جبکہ 500 میگاواٹ شارٹ فال کا سامنا ہے اور طلب5 ہزار میگا واٹ سے

تجاوز کر گئی ہے۔ پچھلے چار روز سے گرمی کی شدت میں اضافہ ہونے پر

سسٹم پر لوڈ بڑھنے سے سپلائی لائنوں اور ٹرانسفارمرز میں فنی خرابیوں کی

شکایات بڑھ گئی ہیں۔ لیسکو کے ڈسٹری بیوشن ٹرانسفارمر اوور لوڈ ہونے کے

باعث جواب دینے لگے ہیں۔تکنیکی خرابیوں کے باعث شدید گرمی اور حبس میں

شہری بجلی سے کئی کئی گھنٹے محروم رہنے لگے ہیں۔ گھریلو صارفین سمیت

کاروباری افراد نے حکومت اور لیسکو حکام سے بجلی کی بلاتعطل فراہمی کا

مطالبہ کیا ہے۔۔اس حوالے سے ترجمان لیسکو کا کہنا ہے کہ شدید گرمی کے

باعث بجلی کی سپلائی لائنیں مین ہائی سرکٹس بھی متاثر ہو رہے ہیں جس کے

باعث بجلی کی بندش ہونے سے متعلقہ علاقوں کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا

ہے۔ ترجمان کے مطابق شہری اور مضافاتی علاقوں میں اعلانیہ لوڈشیڈنگ نہیں

کی جا رہی ہے ۔ دوسری طرف اسلام آباد میں بارہ کہو کے علاقے ملپور میں

بجلی کی بندش اور گرمی سے سکول کے 25 بچے بے ہوش ہوگئے۔سخت گرمی

کے باعث سکول کے کئی بچوں کی نکسیر بھی پھوٹ پڑی۔ سکول انتظامیہ کا کہنا

تھا کہ بچوں کو طبی امداد کیلئے قریبی ہسپتال منتقل کر دیا گیا، آئیسکو حکام کو

متعدد شکایات کے باوجود بجلی بحال نہیں ہوئی۔ سخت گرمی اور غیر اعلانیہ

لوڈشیڈنگ کے باعث سکول میں چھٹی دے دی گئی۔دوسری جانب نیشنل الیکٹرک

پاور ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا) نے ملک بھر میں اضافی لوڈ شیڈنگ کا نوٹس لے

لیا اور بجلی کی تمام تقسیم کار کمپنیوں سے غیراعلانیہ لوڈ شیڈنگ پر وضاحت

طلب کی ہے۔نیپرا اعلامیے کے مطابق تمام ڈسکوز بشمول کے الیکٹرک سمیت

بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کے سی ای اوز کو جمعے کو طلب کیا گیا ہے۔نیپرا کا

کہنا ہے کہ تمام تقسیم کار کمپنیاں صارفین کو بلا تعطل بجلی فراہم کرنے کی پابند

ہیں۔

بجلی کا بحران شدی


ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply