Pakistan Peoples Party & Pakistan Muslim League Noon Parties Falgs

باغی سینیٹرز کی تلاش، مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی نے کمیٹیاں تشکیل دیدیں

Spread the love

اسلام آباد( جے ٹی این آن لائن سٹاف رپورٹر) باغی سینیٹرز کی تلاش

باغی سینیٹرز کی تلاش کیلئے مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی نے کمیٹیاں تشکیل

دیدیں- تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز ملک کی دونوں بڑی سیاسی جماعتوں

مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کے الگ الگ اجلاس ہوئے جس میں سینیٹ چیئرمین

کیخلاف تحریک عدم اعتماد میں خفیہ رائے شماری کےدوران پارٹی لائن سے

انحراف کرنے والی باغی سینیٹر کی تلاش کیلئے کمیٹیاں تشکیل دی گئیں-

سینیٹ میں ہارس ٹریڈنگ کامیاب، جمہوریت کو شکست ہوئی، شہباز شریف

مسلم لیگ ن کے صدر میاں شہباز شریف نے پارٹی کے سینیٹرز کے منعقدہ

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا سینیٹ چیئرمین کیخلاف عدم اعتماد تحریک

میں ناکامی پر جن سینیٹرز نے اپنے ضمیر بیچے انہیں سامنے لاکر ان کیخلاف

کارروائی کریں گے۔ اجلاس میں انہوں نے چیئرمین سینیٹ کیخلاف تحریک عدم

اعتماد کی ناکامی پر اراکین سے تشویش کا اظہار کیا اور کہا جمعرات کوسینیٹ

اجلاس میں ہارس ٹریڈنگ جیت گئی اور جمہوریت ہار گئی۔ جمہوریت کے وقار

کو ایک بار پھر مجروح کیا گیا اوراس سے صرف اپوزیشن کا نقصان نہیں ہوا۔

پڑھیں: چیئرمین سینیٹ کے خلاف تحریک عدم اعتماد ناکام

شہبازشریف نے کہا تحریک عدم اعتماد کی ناکامی کی وجوہات تلاش کریں گے،

جنھوں نے ضمیر فروشی کی ہے انہیں سامنے لایا جائیگا۔ اجلاس میں پارٹی لائن

سے منحرف ہونے والے سینیٹرز کی تلاش کیلئے کمیٹی تشکیل دی گئی۔ فیکٹ

فائنڈنگ کمیٹی آئندہ ہفتے اپنی سفارشات مرتب کرے گی۔ ذرائع کے مطابق اجلاس

میں تجاویز مانگنے پر لیگی سینیٹرز پھٹ پڑے اور استعفے کے معاملے پر متفق

نہ ہو سکے۔ سوشل میڈیا پر چلنے والی فہرست پر جنرل (ر) عبد القیوم نے

وضاحت کی۔ سینیٹر کلثوم پروین کا کہنا تھا میں خانہ کعبہ جا رہی ہوں، ایسا کوئی

کام نہیں کیا۔ آپ سب کیلئے بھی وہاں دعا کروں گی۔ اجلاس میں سینیٹرز کے حلف

اْٹھانے کی تجویز بھی پیش کی گئی۔ جس پر اجلاس میں موجود مصدق ملک نے

کہا قرآن پاک اْٹھا کر بھی لوگ مکر جاتے ہیں۔ لیگی سینیٹرز نے سوشل میڈیا پر

چلنے والی لسٹ کے معاملے پرجلد ہی مشترکہ پریس کانفرنس کرنے کا اعلان کیا

ہے تاہم شہباز شریف نے کہا کمیٹی کی رپورٹ اور تمام تجاویز کو پارٹی قائد نواز

شریف کے سامنے رکھوں گا جو بھی فیصلہ ہوگا سب کو قبول کرنا ہوگا لہٰذاتمام

سینیٹرز نواز شریف کے فیصلے کا انتظار کریں۔

سینیٹرز پر کس نے دبائو ڈالا، حکومت تحقیقات کرائے، مسلم لیگ (ن) کا مطالبہ

اجلاس کے بعد مسلم لیگ (ن) کے رہنمائوں مشاہد اللہ خان نے مریم اور نگزیب

اور احسن اقبال کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مطالبہ کیا چیئر مین سینٹ

کیخلاف تحریک عدم اعتماد پر 14 سینیٹرزنے میر جعفر و صادق کا کردار ادا کیا،

مزید پڑھیں: سینیٹ میں شکست، پیپلز پارٹی کے تمام سینیٹرز نے استعفے دیدیے

کس نے سینیٹرز پر دبائو ڈالا اس معاملے کی تحقیقات ہونی چاہیے، چیئرمین سینیٹ

کیخلاف تحریک کے حق میں 64 ارکان کھڑے ہوئے، بیلٹ باکس سے ووٹ

صرف 50 نکلے، 2018ء میں بھی ایسا ہوا تھا، تحقیقات کیلئے سینیٹر رانا مقبول

کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دیدی، اپوزیشن کیساتھ ملکر سینیٹ کے انتخابات

کیلئے ترامیم لائی جائیں گی۔ یکم اگست پاکستان کی جمہوریت کا سیاہ دن کے طور

پر یاد رکھا جائے گا، پاکستان کا کوئی ادارہ ایسا نہیں کر سکتا، یہ پاکستان دشمن

ایجنسیوں نے ایسا کیا ہوگا، 50 لوگوں کی حرمت بچانے کیلئے 14 لوگوں کو بے

نقاب کریں گے۔

پیپلز پارٹی سینیٹرز کا استعفے جمع کرانا اہم فیصلہ،مصطفی نواز، فرحت بابر

پاکستان پیپلز پارٹی کی قیادت نے چیئرمین سینیٹ کے خلاف قرارداد کی ناکامی

کے بعد دغا بازی کرنے والے ارکان کا سراغ لگانے کیلئے تحقیقاتی کمیٹی تشکیل

دے دی۔ مصطفیٰ نواز کھوکھرنے کہا پیپلز پارٹی واحد جماعت ہے جس کے تمام

ارکان نے استعفے جمع کرا رکھے ہیں، پیپلز پارٹی کے تمام ارکان کی جانب سے

استعفے جمع کرانا ایک اہم فیصلہ ہے۔ پیپلز پارٹی کے رہنماء سینیٹر فرحت اللہ بابر

یہ بھی پڑھیں: سینیٹ میں ناکامی، اپوزیشن نے آئندہ ہفتے اے پی سی طلب کرلی

نے کہا پارٹی نے سید یوسف رضا گیلانی، سید نیر حسین بخاری، سعید غنی، صابر

بلوچ اور فرحت اللہ بابر پر مشتمل 5 رکنی فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی بنا دی، یہ کمیٹی

اگر ضروری سمجھے گی تو دیگر اراکین کو بھی شامل کر سکتی ہے، یہ فیکٹ

فائنڈنگ کمیٹی استعفوں کے متعلق پارٹی لیڈرشپ کو سفارشات بھی پیش کرے گی۔

باغی سینیٹرز کی تلاش

Leave a Reply