انسٹاگرام کا صارفین کوذہنی،نفسیاتی و جسمانی نقصان سے بچانے کیلئے اہم اقدام

Spread the love

سماجی رابطے کی ویب سائٹ انسٹاگرام نے اپنے صارفین کو دلخراش مناظر،غصیلی اور خود کو نقصان پہنچانے والے مواد کے پھیلائو کی روک تھام کے لیے نیا فیچر متعارف کرایا ۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق انسٹاگرام نے یہ اقدام برطانوی نوجوان لڑکی مولی رسل کی خودکشی کے بعد پوسٹ کی شیئرنگ کےبعد متعارف کرایا ہے۔ جس کا اعلان انسٹاگرام کے سربراہ ایڈم موسیری نے خود کیا۔

اس فیچر سے زخم، قتل، خودکشی اور دیگر دلخراش مناظر کی تصاویر کو دھندلا کردیا جائے گا اور صرف خواہشمند صارفین کے بٹن دبانے پر ہی دستیاب ہوں گے۔

فیچرکی بدولت پیج پراسکرولنگ کے دوران یہ مناظر اچانک سامنے نہیں آئیں گے۔ فیچر کے تحت ایسی تمام تصاویر کو بھی بلاک کردیا جائے گا جس میں کوئی صارف خود کو نقصان پہنچاتا ہوا نظر آئے تاکہ کم عمر نوجوانوں منفی اثر لیتے ہوئے خود کو نقصان نہ پہنچالیں،جیسا برطانیہ میں ایک واقعہ رپورٹ ہوا ہے۔

برطانوی نوجوان لڑکی مولی رسل کی خودکشی کا ذمہ دار والدین نے انسٹاگرام کو قرار دیتے ہوئے موقف اختیار کیا تھا ان کی بیٹی نے انسٹاگرام پر ایک شخص کی تصاویر سے خودکشی کا طریقہ سیکھا تھا۔

Leave a Reply