Taliban

معاہدہ کے مطابق افغانستان سے امریکی فوج نکل جائے ورنہ نتائج سنگین ہونگے،طالبان

Spread the love

امریکی فوج نکل جائے

کابل (جے ٹی این آن لائن نیوز) طالبان نے امریکا کو افغانستان سے امریکی و نیٹو فوجیوں کے انخلاء

کیلئے یکم مئی کی آخری تاریخ سے متعلق معاہدے کی پاسداری نہ کرنے کی صورت میں سنگین نتائج

کی دھمکی دیدی،میڈیارپورٹس کے مطابق یہ انتباہ طالبان نے ماسکو میں پریس کانفرنس کے دوران

جاری کیا۔امریکی صدر جوبائیڈن کی انتظامیہ کا کہنا تھا وہ سابق صدر ٹر مپ انتظامیہ اورطالبان کے

مابین طے شدہ معاہدے پر نظرثانی کررہی ہے۔طالبان کی جانب سے مذاکرات کرنیوالی ٹیم کے ایک

رکن سہیل شاہین نے صحافیوں سے کہا انہیں جانا ہوگا اور یکم مئی سے آگے امریکی فوجیوں کا رکنا

دراصل معاہدے کی خلاف ورزی تصور ہوگا، معاہدے کی خلاف ورزی ہماری طرف سے نہیں ہوگی

جس کے نتیجے میں اس کا رد عمل ظاہر ہو گا ۔رکن سہیل شاہین نے اس کے بارے میں تفصیل نہیں

بتائی کہ یہ ردعمل کیا شکل اختیار کرے گا لیکن فر و ر ی 2020ء میں انہوں نے جس معاہدے پر

دستخط کیے تھے اس پر عمل کرتے ہوئے طالبان نے امریکی یا نیٹو فورسز پر حملے نہیں کیے حتیٰ

کہ گز شتہ چند مہینوں کے دوران غیراعلانیہ بم دھماکوں اور ٹارگٹ کلنگ میں بھی اضافہ ہوا ہے۔

طالبان رہنما نے کہا ہم ا مید کرتے ہیں ایسا نہیں ہوگا ، وہ دستبردار ہوجائیں گے، ہم افغانستان کے

مسئلے کے حل اور پرامن تصفیہ پر توجہ مرکوز کریں گے تاکہ ایک سیاسی روڈ میپ تک پہنچیں،

مستقل اور جامع جنگ بندی ہوسکے۔انہوں نے اس بات کی بھی تصدیق کی کہ طالبان اسلامی حکومت

کے مطالبے پر قائم ہیں۔سہیل شا ہین نے اس کی تفصیل نہیں بتائی کہ اسلامی حکومت کا ڈھانچہ کیسا

ہوگا۔علاوہ ازیں انہوں نے یہ نہیں بتایا آیا طالبان انتخابات کو قبول کریں گے یا نہیں لیکن انہوں نے

اس بات پر زور دیا کہ صدر اشرف غنی کی حکومت ان کی اسلامی حکومت کی تعریف کے مطابق

نہیں ہے ۔

امریکی فوج نکل جائے

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply