امریکہ کی متعدد جنوبی ریاستوں میں طوفانی بگولوں کی تباہی، 3بچوں سمیت 8افراد ہلاک

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

واشنگٹن(بیوروچیف)امریکہ کی متعدد جنوبی ریاستوں میں طوفانی بگولوں نے

زبردست تباہی مچادی جس کے باعث تین بچوں سمیت8 افراد کے ہلاک، متعدد

زخمی ہوگئے۔ تیز ہوائوں اور جھکڑ خطرناک بگولوں کی شکل میں میسیسی پی

کی ریا ست میں گھومتے ہوئے سیاہ بادلوں کی جلو زمین پر اترے تو اپنی زد میں

آنیوالی عمارتوں کو تباہ کرتے چلے گئے۔ ریاست کی گورنر فل برائنٹ نے

ایمرجنسی کا نفاذ کرکے نقصان کا اندازہ لگانے کی ہدایت جاری کردی۔ موسمیاتی

چینل کی ابتدائی رپورٹ کے مطابق ہملٹن شہرپرجب بگولا اترا تو اس وقت آندھی

کی رفتار130 میل فی گھنٹہ تھی جس سے 55 گھر،ایک چرچ اورچار کاروباری

عمارتیں تباہ ہوگئیں، اس دوران قریبی ریاست ٹیکساس کے شہرپولوک میں جھکڑ

چلنے سے متعدد درخت گرگئے، ایک درخت گاڑی پر آگرا جہاں پچھلی نشست

پر بیٹھے دو بچے زد میں آگئے جبکہ اگلی نشست پر بیٹھے ان کے والدین محفوظ

رہے، جبکہ دیگر دو افراد بگولے کی زد میں آکر ہلاک ہوئے، چینل کے مطابق

میسیی پی، ٹیکساس، لوزینا اورجارجیا کی جنوبی ریاستوں میں نوے ہزار صارفین

بجلی سے محروم رہے۔ مشرقی ٹیکساس کے ایک ثقافتی میلے کے دوران بگولے

نے تباہی مچا دی، جس سے ایک خاتون ہلاک، 24 سے زائد افراد زخمی ہوئے۔

ملحقہ ہیوسٹن کائونٹی میں بھی ایک شخص کے ہلاک ہونے کی اطلاع ملی ہے۔

ریاست لوزینا میں طوفان اور تیز بارشوں کے سبب سیلاب میں دو افراد ڈوب

گئے۔ محکمہ موسمیات نے اتوار کی رات واشنگٹن ڈی سی اور نواحی علاقوں

میری لینڈ، ورجینیا، مغربی ورجینیا، پنسلوینیا اور نیویارک اوراوہائیو کے کچھ

علاقوں میں ممکنہ طوفان کی وارننگ جاری ہوئی تھی، جہاں زیادہ ترمقامات پر

طوفان کسی نقصان کے بغیر گزرگیا۔ اوہائیومیں بگولے کے باعث 6 افراد زخمی

ہوئے ہیں۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply