لابی یا کاروباری مفاد

امریکہ انخلاءسے قبل افغانستان کا سیاسی حل نکالے, عمران خان

Spread the love

امریکہ انخلاءسے قبل

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن نیوز) وزیراعظم نے کہا ہے امریکا کو افغانستان سے انخلا سے قبل

سیاسی تصفیہ کرنا چاہیے، افغان جنگ میں زیادہ نقصان پا کستا ن نے اٹھایا،غیر ملکی ٹی وی کو

انٹرویو دیتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا پاکستان میں اس وقت 30 لاکھ افغان پناہ گزین

ہیں، امریکا افغان جنگ میں 70 ہزار سے زا ئد پا کستانی شہید ہوئے،۔سیاسی حل کے بغیر افغانستان

میں خانہ جنگی کا خطرہ ہے، جو بھی افغان عوام کی نمائندگی کرتا ہے ہم اس سے رابطہ رکھیں

گے،، اگر طالبان کو افغان جنگ میں مکمل فتح حاصل ہوگئی تو بڑے پیمانے پر خون ریزی ہوگی جس

کے نتیجے میں پاکستان سب سے زیادہ متاثر ہوگا، امریکا کو انخلا سے قبل لازما سیاسی حل نکالنا

ہوگا، سیاسی حل یہ ہوسکتا ہے کہ ایک اتحادی حکومت تشکیل دی جائے جس میں طالبان اور دوسرے

فریق شامل ہوں۔مرد روبوٹ نہیںعورت مختصر کپڑے پہنے گی تو اثر توپڑےگاوزیراعظم کا کہنا تھا

بھارت سے ہماری تین جنگیں ہوئیں، جب سے جوہری قوت بنے ہیں بھارت سے کوئی جنگ نہیں

ہوئی، پاکستان کا جوہری پروگرام صرف ملکی دفاع کے لیے ہے، جوہری ہتھیاروں کے خلاف ہوں،

ہمارے جوہری ہتھیار دفاع کے لیے ہیں۔عمران خان نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں ظلم ہو رہا ہے،

عالمی برادری بات کیوں نہیں کرتی، مقبوضہ کشمیر میں 90 لاکھ افراد کھلی جیل میں قید ہیں، مسئلہ

کشمیر پر بات نہ کرنا منافقت ہے، مسئلہ کشمیر حل ہو گیا تو دونوں ممالک مہذب اقوام کی طرح رہیں

گے۔ ان کا کہنا تھا کہ چین نے ہر مشکل وقت میں پاکستان کا ساتھ دیا، جب ہماری معیشت کمزور تھی

چین نے مدد کی، چین پاکستان کا عظیم دوست ہے۔وزیراعظم نے مزید کہا کہ جزوی لاک ڈاو¿ن

اور جامع اعداد و شمار سے کورونا کنٹرول کیا، ہم نے مکمل لاک ڈاو¿ن کے بجائے سمارٹ لاک

ڈاو¿ن لگایا، ہم نے کنٹرول اینڈ کمانڈ سینٹر قائم کیا جہاں پورے پاکستان سے ڈیٹا آتا ہے، کنٹرول

اینڈ کمانڈ سینٹر میں پاک فوج کی مدد لی، صوبوں کو شامل کیا، ہم نے ہاٹ اسپاٹ ایریاز میں اسمارٹ

لاک ڈاو¿ن لگایا ہر ایک پر نہیں۔۔ انہوں نے کہا کہ برصغیر میں 1.4 ارب کی آبادی ہے جو کشمیر

کے تنازع کی وجہ سے یرغمال بنی ہوئی ہے، اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق وہاں استصواب

رائے ہونا چاہیے، اگر امریکا چاہے تو یہ مسئلہ حل ہوسکتا ہے زمانہ کرکٹ میں اپنی پلے پوائے

جیسی زندگی سے متعلق سوال کے جواب میں عمران خان نے کہا کہ یہ میری ذات کی نہیں بلکہ

میرے معاشرے کی بات ہے، میری ترجیح یہ ہے کہ میرا معاشرہ کیسے برتا کرتا ہے اور کیا

ردعمل آتے ہیں، لہذا جب ہمارے ہاں جنسی جرائم بڑھتے ہیں تو ہم بیٹھ کر اس مسئلے کا حل

سوچتے ہیں۔

امریکہ انخلاءسے قبل

ستاروں کا مکمل احوال جاننے کیلئے وزٹ کریں ….. ( جتن آن لائن کُنڈلی )
قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply