امریکا جاپان مشترکہ بیان خطے میں امن و استحکام کیلئے خطرہ، چین

امریکا جاپان مشترکہ بیان خطے میں امن و استحکام کیلئے خطرہ، چین

Spread the love

واشنگٹن (جے ٹی این آن لائن نیوز) امریکا جاپان مشترکہ بیان

امریکی صدر جوبائیڈن اور جاپانی وزیراعظم یوشی ہیدے سوگا کی ملاقات پر

امریکا میں چینی سفارتخانے نے اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ تائیوان، ہانگ کانگ

اور سنکیانگ چین کے داخلی امور ہیں۔ چین کے داخلی امور میں مداخلت نہیں کی

جانی چاہیے۔ امریکا جاپان کے مشترکہ بیان کی مخالفت کرتے ہیں۔ چینی سفارتخانہ

کی جانب سے مزید کہا گیا کہ امریکا جاپان مشترکہ بیان خطے میں امن و استحکام

کیلئے خطرہ ہے۔

=–= امریکی صدر، جاپانی وزیراعظم کی ملاقات، چین مخالف اتحاد کا مظاہرہ

قبل ازیں امریکی صدر جو بائیڈن اور جاپانی وزیراعظم یوشی ہیڈے سوگا نے وائٹ

ہاؤس میں ملاقات کے دوران عالمی سطح پر چین کے بڑھتے اثر و رسوخ کے

خلاف تعاون پر اتفاق کیا۔ مقامی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق جو بائیڈن نے

مشترکہ نیوز کانفرنس کے دوران اس ملاقات کو نتیجہ خیز قرار دیتے ہوئے کہا کہ

وزیر اعظم سوگا اور انہوں نے واشنگٹن ٹوکیو اتحاد اور مشترکہ سلامتی کے لیے

تعاون پر اتفاق کیا۔ دونوں رہنماﺅں کی ملاقات کے ایجنڈا میں چین سرفہرست رہا۔

بائیڈن نے بیجنگ کا مقابلہ کرنے کے لیے امریکی کوششوں میں جاپان کے

مرکزی کردار پر زور دیا۔ دونوں رہنماؤں نے جیوپولیٹیکل امور کے ساتھ ساتھ

بالخصوص آبنائے تائیوان میں امن و استحکام کی اہمیت پر بھی تبادلہ خیال کیا۔

صدر بائیڈن کی جانب سے اقتدار سنبھالنے کے بعد کسی بھی غیر ملکی رہنما کے

ساتھ یہ پہلی دو بدو ملاقات تھی۔ واضح رہے امریکہ اور چین کے مابین حالیہ کچھ

سالوں میں باہمی تعلقات انتہائی کشیدہ چلے آ رہے ہیں، چین کی کوشش ہے کہ

کشیدگی ختم کی جائے تاہم امریکہ سپر پاور ہونے کے ناطے اپنی بالا دستی کا

خواہاں چلا آ رہا ہے حالانکہ چین امریکہ کو کئی ایک شعبوں میں پچھاڑ چکا ہے

امریکا جاپان مشترکہ بیان

=-= دنیا بھر سے مزید معلومات پر مبنی خبریں ( =–= پڑھیں =–= )
=قارئین=کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply