افغان طالبان وعدے ایفا کریں ان کیساتھ کام کرنے کو تیار ہیں، امریکہ

افغان طالبان وعدے ایفا کریں ان کیساتھ کام کرنے کو تیار ہیں، امریکہ

Spread the love

واشنگٹن، کابل (جے ٹی این انٹرنیشنل نیوز) افغان طالبان وعدے ایفا

امریکی وزیرخارجہ انٹونی بلنکن نے کہا ہے کہ امریکہ وعدے اور فرائض

پورے کرنے پر طالبان حکومت کیساتھ کام کر سکتا ہے بصورت دیگر ایسا نہیں

ہو گا۔ یہ بات انٹونی بلنکن نے افغان خبر رساں ایجنسی گفتگو میں بتائی اور مزید

کہا میری امید اور امید سے بڑھ کر توقع یہ ہے کہ افغانستان کی آئندہ حکومت

بنیادی انسانی حقوق برقرار رکھے گی اور اگر وہ ایسا کرتی ہے تو یہ وہ حکومت

ہو گی جس کے ساتھ ہم کام کر سکتے ہیں، اگر وہ ایسا نہیں کرتی تو ہم اس کے

ساتھ کام نہیں کریں گے۔ امریکہ کے طالبان کو تسلیم کرنے سے متعلق سوال کے

جواب میں انہوں نے کہا کہ یہ مکمل طور پر اس پر انحصار کرتا ہے کہ وہ کیا

کرتے ہیں نہ کہ اس پر کہ وہ کیا کہتے ہیں، ہمارے اور باقی دنیا کے ساتھ ان کے

تعلقات کی رفتار ان کے اقدامات پر منحصر ہے۔ امریکہ کو افغان حکومت کی

فہرست میں موجود کچھ افراد کی وابستگیوں اور ٹریک ریکارڈ پر تشویش ہے۔

=-= دنیا بھر سے مزید تازہ ترین خبریں ( =–= پڑھیں =–= )

قبل ازیں امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے اپنے جرمن ہم منصب ہائیکو ماس

سے جرمنی میں امریکی ایئر بیس رامشٹائن میں ملاقات کے بعد کہا کہ عسکریت

پسند گروہ طالبان کو اپنے عمل کے ذریعے ہی بین الاقوامی حمایت حاصل کرنا

ہو گی۔ جرمن وزیر خارجہ نے بھی اسی نوعیت کے خیالات کا اظہار کیا تاہم

انہوں نے طالبان کے ساتھ مذاکرات کو بعید از امکان قرار نہیں دیا۔ انہوں نے

مزید کہا کہ تینتیس ارکان پر مبنی طالبان کی عبوری حکومت میں نہ تو کوئی

خاتون شامل ہے اور نہ ہی دیگر سیاسی دھڑوں کے نمائندے۔

=-،-= طالبان حکومت کو تسلیم کرنے کا پیغام نہیں دیا، وائٹ ہاﺅس

طالبان کی حکومت کو تسلیم کرنے سے متعلق وائٹ ہاﺅ س کا موقف بھی سامنے آ

گیا، ترجمان وائٹ ہاﺅس نے کہا ہے کہ امریکہ نے طالبان کی حکومت کو تسلیم

کرنے کا پیغام نہیں دیا۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق وائٹ ہاﺅ س کی

ترجمان جین ساکی نے کہا کہ امریکہ کو ایسی کوئی جلدی نہیں کہ وہ طالبان کی

حکومت کو تسلیم کرے، امریکی شہریوں کو نکالنے کے لیے طالبان سے بات

چیت کر رہے ہیں۔ ترجمان نے مزید کہا کہ طالبان کی یہ ایک عبوری کابینہ ہے

جس میں کوئی صدر نہیں ہے، انہیں اپنے آپ کو منوانے کے لیے بہت کچھ

کرنے کی ضرورت ہے۔

=-،-= طالبان 200 غیر ملکیوں کے انخلاء پر رضا مند ہو گئے، امریکی حکام

امریکی حکام نے دعویٰ کیا ہے کہ افغانستان میں 31 اگست کے بعد رہ جانے

والے غیر ملکیوں کے انخلاء پر طالبان رضا مند ہو گئے ہیں۔ میڈیارپورٹس کے

مطابق امریکی حکام نے کہا کہ افغانستان میں رہ جانے والے ان غیر ملکیوں میں

200 امریکی اور دیگر ممالک کے لوگ شامل ہیں۔ امریکی حکام نے مزید بتایا کہ

200 امریکی اور دیگر غیر ملکی شہری بذریعہ چارٹر پرواز افغانستان سے

نکلیں گے۔ امریکی حکام نے یہ بھی بتایا کہ امریکیوں اور غیر ملکیوں کے اس

انخلاء کے لیے طالبان پر امریکی نمائندہ خصوصی زلمے خلیل زاد نے دباﺅ ڈالا

ہے۔

=-،-= نئی افغان حکومت کی حلف برداری کل، روسی عہدیدار شریک ہونگے

نئی افغان حکومت کل 11 ستمبر کو حلف اٹھائے گی، تقریب میں روس کے

عہدے دار شریک ہوں گے، پاکستان نے نئی افغان حکومت کیلئے نیک خواہشات

کا اظہار کیا ہے۔ میڈیارپورٹس کے مطابق ترجمان دفترِ خارجہ نے کہا کہ امید

ہے کہ افغانستان میں نئے سیاسی انتظام کے تحت امن و استحکام اور سلامتی کو

یقینی بنایا جائے گا۔

=-،-= افغان عوام جو راستہ منتخب کریں ہم ساتھ ہیں، سعودی عرب

سعودی وزیرِ خارجہ شہزادہ فیصل نے کہا کہ سعودی عرب افغان عوام کی مدد

کے لیے پرعزم ہے، افغان عوام بغیر بیرونی مداخلت کے جو راستہ بھی منتخب

کریں گے سعودی عرب اس کی حمایت کرے گا۔

افغان طالبان وعدے ایفا ، افغان طالبان وعدے ایفا ، افغان طالبان وعدے ایفا

افغان طالبان وعدے ایفا ، افغان طالبان وعدے ایفا ، افغان طالبان وعدے ایفا

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

Leave a Reply