USA Flag

افغان امن عمل کیلئے ترکی، روس کوششیں ہماری پالیسی کے عین مطابق، امریکہ

Spread the love

واشنگٹن(جے ٹی این آن لائن انٹرنیشنل نیوز) افغان امن عمل امریکہ

امریکہ نے واضح کیا ہے کہ وہ افغان امن عمل میں خطے کے ممالک کے کردار

کے حق میں ہے اور تمام فریقوں کو بامقصد مذاکرات پر آمادہ کرنے میں ترکی

اور روس کی دلچسپی کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے۔ یہ تبصرہ امریکی محکمہ

خارجہ کے ترجمان نیڈ پرائس نے گزشتہ روزیہاں معمول کی پریس بریفنگ میں

ایک سوال کا جواب دیتے ہوے کیا۔ ان سے پوچھا گیا تھا ترکی نے افغانستان کے

فریقوں کو اپریل میں اپنے ہاں مذاکرات کی دعوت دی ہے۔ اس کے علاوہ روس

بھی اگلے ہفتے اس سلسلے میں ایک کانفرنس کی میزبانی کررہا ہے اور پہلے ہی

طالبان کو عبوری حکومت میں شرکت کی تجویز دے چکا ہے۔ کیا ان کوششوںمیں

امریکہ کو اعتماد میں لیا گیا یا نہیں؟

=-= یہ بھی پڑھیں: 12 برس سے زائد عمر کی افغان لڑکیوں پر گانے کی پابندی

امریکی ترجمان نے جواب میں امریکی موقف بیا ن کرتے ہوئے مزید کہا اسوقت

امریکہ کے خصوصی مندوب زلمے خلیل زاد کچھ عرصے کیلئے قطر میں موجود

ہیں جنہیں تمام معاملات سے مکمل باخبر رکھا جارہا ہے۔ ترکی اور روس مسئلہ

افغانستان کے حل کیلئے جو کوششیں کررہے ہیں وہ امریکہ کی پالیسی کے عین

مطابق ہیں، جیسا کہ امریکی وزیر خارجہ بلنکن نے افغان پالیسی بیان کرتے ہوئے

کہا تھا امریکہ خطے کے ممالک، ا پنے اتحادی اور اقوام متحدہ سمیت تمام اداروں

کے اس سلسلے میں مثبت کردار کا خیر مقدم کرے گا۔ امریکہ چاہتا ہے ان ساری

کوششوں کے نتیجے میں افغانستان میں قیام امن کا عمل تیز ہو، سیاسی سمجھوتہ

طے پائے، مستقل اور جامع سیز فائر ہو۔

=-= افغانستان میں پائیدار قیام امن کیلئے عالمی حمایت ضروری، واشنگٹن

ترجمان کا کہنا تھا افغانستان میں منصفانہ اور پائیدار امن کے قیام کے لئے بین

الاقوامی حمایت بہت ضروری ہے۔ افغانستان کے لئے امریکی خصوصی مندوب

اور محکمہ خارجہ نے ہمیشہ کوشش کی ہے کہ خطے کے ممالک پائیدار اور

پرامن حل کی تلاش میں تعمیری کردار ادا کریں۔ اس مسئلے حل کے لئے امریکہ

اور روس دونوں ایک دوسرے سے رابطے میں ہیں۔

افغان امن عمل امریکہ

=قارئین=: کاوش اچھی لگے تو شیئرکریں، فالو کریں اپڈیٹ رہیں

Leave a Reply