اسرائیلی فوج کے ظلم کا نشانہ بننے والی فلسطینی خاتون کی ویڈیووائرل

Spread the love

مقبوضہ بیت المقدس (مانیٹرنگ ڈیسک)مقبوضہ بیت المقدس کے جنوبی علاقے

قلندیا میں اسرائیلی فوج نے فائرنگ کر کے خاتون کو شہید کرنے کی ویڈیو وائرل

ہو گئی۔میڈیارپورٹس کے مطابق اسرائیلی فوج کی یہ ویڈیو سوشل میڈیا پر ٹائمز آف

غزہ نے شیئر کی۔ اس ویڈیو کو اب تک ایک لاکھ 16 ہزار سے زائد لوگ دیکھ

چکے ہیں۔ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ فائرنگ کے بعد اسرائیلی فوج کے

کارندے وہیں دندناتے رہے تاکہ کوئی مدد کو نہ آسکے اور زیادہ سے زیادہ سے

خون بہہ جائے۔یہ واقعہ بیت المقدس کو مغربی کنارے سے الگ کرنے والی قلندیا

کی فوجی چیک پوسٹ پر پیش آیا۔اسرائیلی پولیس کے ترجمان نے دعویٰ کیا کہ

خاتون نے اپنے پاس موجود چاقو نکالا تھا جس پر اسے فائرنگ کا نشانہ بنایا گیا۔

اسرائیل میں پارلیمانی انتخابات کے ایک روز بعد پیش آنے والے اس افسوس ناک

واقعے میں فوج کا نشانہ بننے والی خاتون کو زخمی حالت میں بیت المقدس میں

واقع ایک ہسپتال منتقل کیا گیا۔بعد ازاں اسرائیلی پولیس اور طبی ذرائع نے خاتون

کی موت کی تصدیق کر دی۔فلسطینی صحافی نے اپنے ایک ٹوئٹ میں بتایا کہ

انہوں نے اپنے طور پر وزارت صحت سے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ

اسرائیلی فوج کے ہاتھوں ظلم کا شکار ہونے والی خاتون قلندیا کے پناہ گزین کیمپ

سے تعلق رکھتی تھی۔ خاتون کا نام الہ نفتھ وحدان ہے جس کی عمر 25 برس تھی۔

اسرائیلی فوج کی یہ ویڈیو سوشل میڈیا پر ٹائمز آف غزہ نے شیئر کی۔ اس ویڈیو کو

اب تک ایک لاکھ 16 ہزار سے زائد لوگ دیکھ چکے ہیں۔

Leave a Reply