اداروں کی حالت توقع کے بر عکس خراب نکلی

Spread the love

اسلام آباد(جنرل رپورٹر) وزیر اعظم عمران خان کا کہنا ہے ماضی میں کبھی بھی

ملک کو اتنے زیادہ خسارے کا سامنا نہیں کرنا پڑا جبکہ توقع نہیں تھی کہ اداروں

کے حالات اتنے برے ہوں گے۔پاکستان کو اللہ تعالیٰ نے بہت خوبصورتی دی ہے ،

‘پاکستان سیاحت کو فروغ دے کر اربوں ڈالر کی آمدنی حاصل کر سکتا ہے، ےہ

ملک قدیم تہذیبوں کا گہوارہ ،ہمارا مکران کا ساحل، شمالی علاقہ جات سیاحت

کےلئے جنت دنیا کی آدھی بلند ترین چوٹیاں، ہماری پہاڑی سیاحت سوئٹر زلینڈ

سے دگنا ہے ، ہم نے دنیا کیلئے پاکستان کھول دیا ہے ،کرنٹ اکاﺅنٹ خسارہ

سیاحت سے پورا کریں گے ،

دنیا میں سبز پاسپورٹ کی عزت کرائیں گے ، اووسیز پاکستانیوں سے اپیل ہے کہ

”پاکستان بناﺅسرٹیفکیٹ “ خرید یں، کسی حکومت کواتنے خسارے کا سامنا نہیں

کرنا پڑا ، ادائیگیوں کا بحران ابھی ختم نہیں ہوا ، پاکستان کی یہ حالت کرپشن اور

بدنظمی کی وجہ سے ہوئی ہے۔

وزیر اعظم عمران خان نے کہا اوور سیز پاکستانی شوکت خانم ہسپتال کا آدھا

خسارہ تین ارب روپے بھیجتے ہیں، اوور سیز پاکستانی ملک سے بہت محبت

کرتے ہیں، آئی ایم ایف کی شروع میں شرائط بہت مشکل تھیں اور ہمارے پاس آئی

ایم ایف کے پاس جانے کا آسان راستہ تھا لیکن ہمیں لوگوں کی مشکلات کا احساس

تھا ، اس لئے ہم نے دوست ممالک کا ر±خ کیا تاکہ ان سے فنڈز حاصل کرکے

گزارا کر سکیں ، اس وقت بھی خسارہ ختم نہیں ہوا۔ پہلے ہمارے ملک کی عزت

تھی اور جس طرح یہ ملک آگے جا رہا تھا کہ باہر کے ملکوں میں ہمار ے

سربراہوں کی عزت ہوتی تھی ، موجود ہ حالات بد انتظامی اور کرپشن کی وجہ

سے ہوئے ہیں۔ ہمارے پاس 12کروڑ پاکستانی نوجوان ہیں ، یہ صورتحال سرمایہ

کاری کیلئے موزوں ہے ، ہم سرمایہ کاروں کیلئے آسانیا ں پیدا کررہے ہیں۔ مجھے

پتہ ہے نائن الیون کے بعد پاکستانیوں پر کیا گزری ؟

ہم اپنے سفارتخانوں کو ہدایات دے رہے ہیں کہ اوور سیز پاکستانیوں کو مکمل

طور پر سہولیات فراہم کریں ، پاکستان میں سرمایہ لگانے کا آج بہترین وقت ہے،

اوور سیز پاکستانیوں سے کہتا ہوں کہ وہ پاکستان بناﺅ سرٹیفکیٹ خریدیں اس سے

جہاں ہم کومدد ملے گی ، وہاں ان کوبھی بہترین ریٹرن ملے گا۔

Leave a Reply