اثاثہ جات کیس ,شہباز شریف کی اہلیہ ، صاحبزادیاں بھی طلب

Spread peace & love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

لاہور ( سٹاف رپورٹر) نیب نے آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں شریف خاندان

کیخلاف تحقیقات کا دائرہ کار مزید وسیع کر دیا ،مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز

شریف کی اہلیہ اور دونوں صاحبزادیوں کو بھی آئندہ ہفتے مختلف تاریخوں میں

طلب کر لیا گیا ، ساتھ ہی انکے نام سٹاپ لسٹ میں شامل کرنے کی سفارش بھی

کردی ۔نیب نے پولیس کے ہمراہ ماڈل ٹائون میں طلبی کے نوٹسزوصول کر ادیئے۔

تفصیلات کے مطابق نیب کی جانب سے آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں شہباز

شریف کی اہلیہ نصرت شہباز کو 17اپریل کو ذاتی حیثیت میں طلب کر لیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق شہباز شریف نے اپنی اہلیہ نصرت شہباز کو کروڑوں روپے

مالیت کے اثاثے تحفے میں دئیے، شہباز شریف نے اپنی اہلیہ کو 5کروڑ 57لاکھ

72ہزار کی رقم تحفے میں دی ہے۔ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ شہباز شریف کی

جانب سے یہ رقم 2013ء سے 2018ء کے درمیان مختلف ٹرانزیکشن کے ذریعے

منتقل کی گئی، نصرت شہباز 12کمپنیوں میں 69لاکھ 56ہزار 500 شیئرز کی

مالک ہیں، 96ایچ ماڈل ٹائون اور مری کی رہائش نصرت شہباز کے نام ہیں اور

نصرت شہباز کے نام قصور اور فیروز والا میں 810 کنال قیمتی زمین ہے۔ نیب

کی جانب سے نصرت شہباز کی طلبی پر ان معاملات سے متعلق سوالات کئے

جائینگے۔ ذرائع کے مطابق شہباز شریف کی صاحبزادیوں کو آمدن سے زائد اثاثہ

جات کیس میں طلب کیا گیا۔رابعہ عمران کو 18اپریل سہ پہر تین بجے جبکہ

جویریہ علی کو 19اپریل سہ پہر تین بجے نیب لاہور ہیڈ کوارٹر میں پیش ہونے کا

حکم دیا گیا۔نیب کی ٹیم نے پولیس کے ہمراہ ماڈل ٹائون میں متعلقہ رہائشگاہوں پر

جا کر طلبی کے نوٹسز وصول کرائے ۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply