corona Special jtnonline2

آسٹریلیا، بنگلہ دیشن پر ڈیلٹا ویریئنٹ کا دھاوا، ترکی، ابوظہبی میں وباء تھم گئی

Spread the love

سڈنی، ڈھاکہ، انقرہ، دُبئی (جے ٹی این آن لائن کرونا سپیشل) آسٹریلیا بنگلہ دیش ترکی

کرونا کی بھارتی قسم نے پورے آسٹریلیا کو اپنی لپیٹ میں لے لیا، بنگلادیش میں

کرونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز پہ قابو پانے کے لیے اعلان کردہ لاک ڈاؤن

کے نفاذ سے قبل ہی دارالحکومت ڈھاکہ میں لوگوں کی بہت بڑی تعداد پھنس کررہ

گئی ہے، ترکی میں کرونا کے نئے کیسز میں نمایاں کمی آنے پر ملک بھر میں کل

یکم جولائی سے پابندیاں ختم کرنے کا اعلان کر دیا گیا ہے جبکہ متحدہ عرب

امارات میں شامل امارت اور وفاقی دارالحکومت ابوظہبی نے کووِڈ 19 کی ویکسین

لگوانے والے افراد ہی کو 20 اگست سے بعض عوامی مقامات میں داخل ہونے کی

اجازت دینے کا فیصلہ کیا ہے-

=–= کرونا وائرس سے متعلق خبریں ( =–= پڑھیں =–= )

عالمی میڈیا کے مطابق آسٹریلیا کے معروف شہر سڈنی میں کرونا کے انتہائی

تیزی سے پھیلنے والے ڈیلٹا ویئریئنٹ کرونا کی بھارتی قسم نے اپنے پنجے گاڑ

دیے ہیں اور اب تک اس کے 128 کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں، سڈنی کے علاوہ

کوئنزلینڈ اورمغربی آسٹریلیا میں بھی ڈیلٹا ویریئنٹ کے کیسز ریکارڈ ہو رہے ہیں،

آسٹریلوی حکام اسے نازک صورتحال قرار دیتے ہوئے لاک ڈاؤن اور سرحدیں بند

کر کے کیسز کی تعداد کم رکھنے کی کوشش کر رہے ہیں، آسٹریلوی وزیراعظم

نے کرونا کی نئی لہر سے نمٹے کی حکمت عملی مرتب کرنے کیلئے قومی

سربراہوں کیساتھ ہنگامی اجلاس کیا۔ اس ہنگامی میٹنگ میں قرنطینہ کے نئے

قواعد اور ویکسین نیشن کو ہر کسی کے لیے لازم قرار دینے جیسے اہم اقدامات پر

بھی غور کیا گیا،

=-= قارئین= کاوش پسند آئے تو اپ ڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

رپورٹس کے مطابق اتنے مہینوں میں یہ پہلی بار ہے جب ملک کے مختلف حصوں

سے ایک وقت میں کرونا کے اتنے کیسز سامنے آئے ہیں، آسٹریلیا کے رکن

پارلیمنٹ جوش فرائیڈین برگ نے کووڈ 19 رسپانس کمیٹی کے اجلاس کے بعد کہا

میں سمجھتا ہوں کہ ہم کرونا کی نئی اور زیادہ خطرناک قسم کے ساتھ اس وباء کے

نئے دور میں داخل ہورہے ہیں، کرونا انفیکشن میں اضافے کے بعد بروقت سڈنی

اور ڈارون میں لاک ڈاؤن اور چاروں ریاستوں میں پابندیاں مزید سخت کر دی گئیں

ہیں۔ نیو ساتھ ویلز کی پریمیئر گلیڈیز برجیکلائین کا کہنا ہے ان کی ریاست میں ڈیلٹا

ویئریئنٹ کے 18 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جبکہ گزشتہ روز 30 کیسز سامنے

آئے تھے جبکہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں 59 ہزار افراد کے کرونا کے ٹیسٹ کیے

گئے ہیں، جس کے بعد نیو ساتھ ویلز کی ریاستی حکومت نے گریٹر سڈنی، بلیو

مانٹین، سینٹرل کاسٹ اور وولون گونگ میں مزید دو ہفتوں کیلیے سخت لاک ڈاؤن

نافذ کردیا ہے، تاہم سڈنی میں صورتحال زیادہ باعث تشویش ہے جہاں 50 لاکھ

رہائشی گھروں پر رہ کر کام کر رہے ہیں۔

=-،-= ایس او پیز توڑنے پر نائب آسٹریلوی وزیراعظم کو جرمانہ

ڈیلٹا ویرینٹ کا آسٹریلیا میں پھیلاﺅ تیز ہو گیا ہے ایسے میں کرونا ایس او پیز

توڑنے پر نائب آسٹریلوی وزیراعظم کو 151 ڈالر کا جرمانہ کر دیا گیا ہے وہ ایک

پیٹرول پمپ پر بغیر ماسک پہنے دیکھے گئے تھے۔ دوسری جانب برازیل میں

کرونا کی ڈیلٹا ورینٹ سے پہلی موت کی تصدیق ہوگئی ہے کرونا میں مبتلا 42

سالہ خاتون کا اپریل میں انتقال ہوا تھا۔ برطانیہ میں حکومت نے 19 جولائی سے

کرونا پابندیوں میں نرمی کرنے کا اشارہ دید یا ہے۔

=-،-= بنگلادیش میں دوبارہ لاک ڈاﺅن کا اعلان، ہزاروں افرد پھنس گئے

بنگلادیش میں کرونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز پہ قابو پانے کیلئے اعلان

کردہ لاک ڈان کے نفاذ سے قبل ہی دارالحکومت ڈھاکہ میں لوگوں کی بہت بڑی

تعداد پھنس کررہ گئی ہے۔ بنگلادیشی میڈیا کے مطابق حکومت نے ملک میں کرونا

وائرس کیسز بڑھنے کے باعث کل یکم جولائی سے ملک گیر لاک ڈاؤن کا اعلان

کررکھا ہے تاہم دارالحکومت ڈھاکہ سمیت کئی شہروں میں اب بھی ہزاروں افراد

پھنسے ہوئے ہیں، بنگلادیش میں اتوار کے روز 8 ہزار 300 سے زائد کرونا کیسز

رپورٹ ہوئے جبکہ پیر کو 119 افراد جان سے گئے، بنگلہ دیشی حکام نے کرونا

وائرس کے کیسز میں خطرناک حد تک اضافے کی بنیادی وجہ ڈیلٹا قسم کے کرونا

کے پھیلاؤ یعنی بھارتی ویرینٹ کو قرار دیا ہے، بنگلادیشی کابینہ کے سیکرٹری

خوندکر انوارالاسلام نے کہا ہے لاک ڈاؤن پر عملدرآمد کیلئے کل بروز جمعرات

سے فوج تعینات ہو گی، مسلح افواج لاک ڈاؤن کے دوران گشت کرتی رہیں گی،

اگر کسی نے ان کے احکامات کو نظرانداز کیا تو ان کیخلاف قانونی کارروائی کی

جائیگی، لاک ڈاؤن میں اشیائے ضروریہ کی دکانیں کھلی ہونگی، کچھ ایکسپورٹ

فیکٹریوں کو بھی کام کرنے کی اجازات دی گئی ہے-

=-،-= ترکی میں یکم جولائی سے کرونا پابندیاں ختم کرنے کا اعلان

ترکی میں کرونا کے نئے کیسز میں نمایاں کمی آنے پر ملک بھر میں کل یکم

جولائی سے پابندیاں ختم کرنے کا اعلان کیا گیا ہے۔ ترکی میں کرونا وبا پر کافی

حد تک قابو پا لیا گیا ہے جس کے باعث کرونا کے نئے کیسز میں نمایاں کمی

دیکھی گئی ہے۔ تفصیلات کے مطابق ترکی کے وزارت داخلہ کی جانب سے جاری

مراسلے میں تمام 81 صوبوں میں کاروبار زندگی کو مرحلہ وار کھولنے کی ہدایت

کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ یکم جولائی سے لاک ڈاون ختم اور کاروباری مراکز

سمیت سینما گھر بھی کھول دیئے جائیں۔ لاک ڈاون کے خاتمے سے شادی بیاہ کی

تقریبات اور اس میں مہمانوں کو کھانا پیش کرنے کی پابندی بھی ختم ہوجائیگی

جس پر شہریوں نے خوشی کا اظہار کیا ہے۔

=-،-= ابوظہبی، ویکسین لگوانے والوں کیلئے عوامی مقامات کُھل گئے

متحدہ عرب امارات میں شامل امارت اور وفاقی دارالحکومت ابوظہبی نے کووِڈ 19

کی ویکسین لگوانے والے افراد ہی کو 20 اگست سے بعض عوامی مقامات میں

داخل ہونے کی اجازت دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ابوظہبی کی

ایمرجنسی، کرائسیس اور ڈیزاسسٹر مینجمنٹ کمیٹی نے ایک اعلامیے میں کہا ہے

کہ امارت میں اہدافی گروپوں کے 93 فیصد افراد کو کووِڈ 19 سے بچاﺅ کے لیے

ویکسین لگائی جا چکی ہے، اس لیے 20 اگست سے صرف ویکسین لگوانے والے

افراد ہی کو بعض عوامی جگہوں، شاپنگ مالز، ریستورانوں اور جِم خانوں میں

داخل ہونے کی اجازت ہو گی۔ کمیٹی بیان کے مطابق پہلے مرحلے میں جامعات،

سکولوں، تعلیمی اداروں، نرسریوں، خریداری مراکز، ریستورانوں، کیفے، جِم

خانوں، تفریح گاہوں، کھیل کے میدانوں، خریداری مراکز سے باہر واقع تھوک کی

دکانوں، سپرمارکیٹوں اور دوا خانوں میں صرف ویکسین لگوانے والے افراد ہی

داخل ہو سکیں گے۔ کمیٹی نے واضح کیا کہ اس فیصلے کا اطلاق ویکسین لگوانے

سے مستثنا افراد پر نہیں ہو گا۔ ایسے افراد کو الحوسن ایپ پررجسٹر ہونا چاہیے

اور ایک منظورشدہ عمل کے ذریعے انھیں ویکسین سے مستثنا قراردیا گیا ہو۔ ان

کے علاوہ 15 سال سے کم عمر بچوں پر بھی اس فیصلے کا اطلاق نہیں ہو گا۔

آسٹریلیا بنگلہ دیش ترکی ، آسٹریلیا بنگلہ دیش ترکی ، آسٹریلیا بنگلہ دیش ترکی ، آسٹریلیا بنگلہ دیش ترکی ، آسٹریلیا بنگلہ دیش ترکی ، آسٹریلیا بنگلہ دیش ترکی

Leave a Reply