124

وزیراعظم ،گورنر ،وزیراعلیٰ کی ملاقات ،ملاوٹ ،قبضہ مافیا کیخلاف اقدامات کی ہدایات

Spread the love

لاہور(نمائندہ خصوصی)وزیراعظم عمران خان نے پنجاب کے بڑے ہسپتالوں میں

شیلٹر ہومز بنانے کی منظوری دیدی، وزیر اعظم نے کہا ہے کہ دیانتدار لوگوں کی

حوصلہ افزائی کی جائے اور کام نہ کرنیوالوں کیخلاف ایکشن لیا جائے، ماحولیاتی

آلودگی کا لیول بڑھنے سے زندگی کے سال کم ہونا شروع ہو جاتے ہیں، ہمیں اپنی

موجودہ اور آنے والی نسلوں کا مستقبل محفوظ بنانا ہے،دودھ اور گوشت سمیت

دیگر کھانے پینے کی اشیا ء کو تسلی بخش بنایا جائے،انسانی زندگیوں سے کسی

کو کھیلنے کی اجازت نہیں دیں گے ،نیشنل پارکس کے تحفظ، ایکو ٹورازم کی

اہمیت، جنگلات اور نیشنل پارکس میں قبضہ مافیا کے خلاف ایکشن لیا جائے۔ ان

خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز دورہ لاہور کے دوران ایوان وزیر اعلیٰ

میں مختلف اجلاسوں کی صدارت کے دوران کیا۔ وزیراعظم کو لاہور آمد پر نئے

منصوبوں اور قانون سازی کے معاملات پر بریفنگ دی گئی، وزیر اعظم کا کہنا

تھا کہ عوام کو ریلیف دینے کے اقدامات کو ترجیح دی جائے۔وزیر اعظم عمران

خان سے وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار اور گورنر پنجاب نے ون آن ون ملاقاتیں

کیں، وزیر اعلی پنجاب نے ملاقات میں وزیر اعظم کو مختلف منصوبوں کے بارے

میں بریفنگ اور پنجاب حکومت کے متعدداقدامات کے حوالے سے آگاہ کیا۔ ذرائع

کے مطابق وزیر اعظم کی صدارت میں ہونیوالے اعلی سطحی اجلاس میں پنجاب

کے بڑے ہسپتالوں میں شیلٹر ہومز بنانے کی منظوری دی گئی، پہلے مرحلے میں

لاہور کے پانچ بڑے ہسپتالوں میں شیلٹر ہومز بنائے جائیں گے۔شیلٹر ہومز بنانے

کیلئے اپٹما کے گروپ لیڈر گوہر اعجاز کی سربراہی میں پانچ ممبر پر مشتمل بورڈ

بھی تشکیل دیدیا گیا ہے، وزیر اعظم نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ

معاشرے کے کمزور طبقوں کی دیکھ بھال ریاست کی ذمہ داری ہے، ریاست

احساس کا نام ہے جو کمزور طبقوں کا سہارا بنتی ہے۔انہوں نے کہا کہ بے گھر

اور مستحق افراد کا سہارا بننے کی مہم میں مخیر حضرات کا بڑھ چڑھ کر حصہ

لینا حوصلہ افزاء ہے،معاشرے کے کمزور طبقوں کی دیکھ بھال ریاست کی ذمہ

داری ہے، ریاست احساس کا نام ہے جو کمزور طبقوں کا سہارا بنتی ہے، وزیر

اعظم کو سیاحت کے فروغ کے حوالے سے صوبائی وزیر سیاحت راجہ یاسر

ہمایوں نے بریفنگ دی۔وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار، کمشنر لاہور ترجمان

وزیراعلی پنجاب سمیت دیگر اعلیٰ حکام شریک ہوئے۔