129

بیت المقدس ہی فلسطین کا دارالحکومت،سعودی عرب

Spread the love

عمان(جے ٹی این آن لائن انٹرنیشنل نیوز ڈیسک)

سعودی عرب کی مجلس شوریٰ کے چیئرمین الشیخ ڈاکٹر عبداللہ بن محمد بن ابراہیم

آل الشیخ نے کہا ہے ریاض فلسطین اور مقبوضہ بیت المقدس کے حوالے سے اینے

تاریخی موقف پرقائم ہے،سعودی عرب القدس کے تاریخی تشخص کو برقرار

رکھنے کے لیے ہرممکن کوشش جاری رکھے گا۔

یہ بھی پڑھیں: اسرائیل فلسطین پر قبضہ ختم کرے، اسلامی تعاون تنظیم

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق اردن کے دارالحکومت عمان میں منعقدہ 19 ویں

عرب پارلیمانی اجلاس سے خطاب میں مجلس شوریٰ کے چیئرمین نے کہا سعودی

قیادت مملکت القدس کے اسلامی اور عرب تشخص کی بحالی کے لیے اپنی ذمہ

داریاں پوری کرے گی۔مسئلہ فلسطین سعودی عرب کی اولین ترجیح ہے۔ القدس

شریف کے تاریخی، اسلامی اور عرب تشخص پرآنچ نہیں آنے دی جائے گی۔

مزید پڑھیں : ٹرمپ کا پروگرام واضح، مسلم دینا پراپنا موقف دے، اسلامی جہاد

سعودی عرب سنہ 1967ء کی جنگ سے قبل والی پوزیشن پر اسرائیل کی واپسی

اور ان علاقوں میں آزاد فلسطینی ریاست کے قیام اور مشرقی بیت المقدس کو

فلسطینی ریاست کا دارالحکومت بنائے جانے کے مطالبے پر قائم رہے گا۔