146

امریکہ سے امن مذاکرات جاری، کوئی معاہدہ نہ ہوسکا،ترجمان طالبان

Spread the love

افغان طالبان کا قطر میں ہونے والے امن مذاکرات سے متعلق کہنا ہے کہ امریکا

کے ساتھ امن مذاکرات جاری ہیں لیکن ابھی تک کوئی معاہدہ نہیں ہوسکا ہے۔غیر

ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ افغانستان میں امن کی بحالی اور نیٹو فورسز

کے افغانستان سے انخلا کیلیے پاکستان کے تعاون سے افغان طالبان اور امریکا

کے درمیان قطر میں گزشتہ کئی روز سے مذاکرات کا سلسلہ جاری ہے، دو روز

قبل مذاکرات کا دوبارہ آغاز ہوا ہے۔بین الاقوامی خبر رساں ایجنسی کے مطابق

ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد کا جاری بیان میں کہنا تھا کہ قطر میں امریکا کے

ساتھ شروع ہونے والے مذاکرات میں افغانستان سے غیر ملکی فوجیوں کے انخلا

پر ہوئی جبکہ دوسرا نکتہ افغانستان کی سرزمین کو دوسروں کی جنگ میں

استعمال نہ کرنا۔ترجمان طالبان کا کہنا تھا کہ امریکا کے ساتھ مذکورہ دو نکات

گفتگو ہوئی تاہم ابھی تک کوئی معاہدہ نہیں ہوسکا کیوں دو مسائل کی نوعیت

انتہائی حساس ہے۔یاد رہے کہ دو رو قبل دوحا میں افغان طالبان کے سیاسی دفتر

کے ترجمان سہیل شاہین کا کہنا ہے کہ طالبان کو امید ہے کہ امریکا کے ساتھ

جاری مذاکرات کے بعد غیر ملکی فوجیں افغانستان سے نکل جائیں گی، غیر ملکی

فوجوں کے انخلا کے بعد افغانستان میں سرگرم مسلح گروپس آپس میں مذاکرات

سے تنازعات کو حل کریں گے۔سہیل شاہین نے امریکی خبر رساں ادارے سے

گفتگو کرتے ہوئے واضح کیا کہ امریکی حکام کے ساتھ دوحا میں ہونے والے

مذاکرات میں جنگ بندی شامل نہیں ہے۔