326

نواز شریف کی سزاء میں معافی کا مراعاتی پیکیج جاری

Spread the love

اسلام آباد (جے ٹی این آن لائن سٹاف رپورٹر)

قائد مسلم لیگ ن ،سابق وزیر اعظم نوازشریف کی سزا میں پونے3 سال کی معافی

کے حوالے سے مراعاتی پیکیج میں سامنے آ گیا۔ پہلے مراعاتی پیکیج کے مطابق

اگر انہوں نے جیل کا کام یعنی صفائی اچھے طریقے سے کی تو ان کی سزا میں

سے 672 دن یعنی تقریبا 2 سال کی کمی ہوسکتی ہے۔ دوسرے مراعاتی پیکیج

کے مطابق سابق وزیراعظم کو جیل میں ثابت کرنا پڑے گا ان کا کردار اچھا ہے

اور اگر وہ یہ ثابت کرنے میں کامیاب رہے تو انہیں ہر سال سزا میں 15 دن کی

معافی مل سکتی ہے جبکہ تیسرے مراعاتی پیکیج کے مطابق حکومت مختلف

تہواروں مثلاً عید، رمضان اور دیگر تہواروں پر جو قید کے دنوں میں کمی کی

جو مراعات دیگر قیدیوں کو دیتی ہے وہی نواز شریف کو بھی ملے گی۔ ہر سال

اگر 30 سرکاری معافیاں لگائیں تو نواز شریف کی سزا میں 210 دن کی مزید کمی

ہوجائے گی۔ سابق وزیراعظم کو 20 دن کی معافی دینے کا اختیار سپرنٹنڈنٹ جیل

کو بھی ہے اور اگر نواز شریف کے چال چلن سے آئی جی اور سیکرٹری داخلہ

خوش ہوں تو وہ بھی انہیں دو دو ماہ کی معافی دے سکتے ہیں۔قبل ازیں میڈیا سے

گفتگو میں آئی جی جیل خانہ جات پنجاب کا کہناتھا نواز شریف جیل میں اپنے

کمرے کی صفائی ستھرائی خود کریں گے، انہیں کوئی مشقتی نہیں ملے گا، انہیں

جیل مینول کے مطابق مشقت دی جا رہی ہے۔ نواز شریف کا معاملہ انتہائی سنگین

ہے وہ اپنی بیرک سے باہر نہیں آ سکتے۔ سابق وزیراعظم کو قید بامشقت کی سزا

سنائی گئی ہے لہٰذا قانون کے مطابق مشقت کے طور پر وہ جیل میں اپنے کمپاﺅنڈ

کی دیکھ بھال خود کریں گے۔ سابق وزیراعظم العزیزیہ ریفرنس میں 7 سال قید

بامشقت کی سزا پر کوٹ لکھپت جیل میں موجود ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply