41

نوازشریف ایک بار پھر پاکستانی نظام کو انگوٹھا دکھا کرچلے گئے، وفاقی وزراء

Spread the love

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف عدالتی اجازت نامہ

ملنے کے بعد علاج کی غرض سے بیرون ملک روانہ ہوگئے ہیں تاہم تحریک

انصاف سے تعلق رکھنے والے بعض وفاقی وزراء نے انہیں تنقید کا نشانہ بنایا

ہے۔وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات ونشریات فردوس عاشق

اعوان نے کہا ہے کہ دعا ہے نواز شریف جلد صحت مند ہوں تاکہ واپس آکرقانون

کاسامنا کر سکیں، وزیراعظم نے انسانی احترام اور قانون کی بالادستی کی مثال

قائم کی، عمران خان کوہرا نے کی کوشش کرنیوالے ان سے ہارے اور آئندہ بھی

ہاریں گے۔ منگل کو فردوس عاشق اعوان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر

پر نواز شریف کی بیرون ملک روانگی کے حوالے سے کہا دعا گو ہیں کہ اللہ

تعالی محمد نواز شریف کو صحت کاملہ عطا فرمائے۔انکی تندرستی کے لیے دعا

کرتے ہیں کہ وہ جلد صحت مند ہوں تاکہ واپس آکر قانون کا سامنا کر سکیں ۔

وزیراعظم عمران خان نے اپنے طرزِ عمل سے انسانی احترام اور قانون کی

بالادستی کی ایک روشن مثال قائم کی ہے۔معاون خصوصی نے مزید کہا کہ عمران

خان کوہرا نے کی کوشش کرنیوالے ان سے ہارے آئندہ بھی ہاریں گے، ایک

طرف مافیاہے تو دوسری جانب عمران خان کی قیادت میں عوام ہیں۔وفاقی

وزیربرائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے ایک بار پھر سابق وزیراعظم

نوازشریف کی بیرون ملک روانگی پر غم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے تنقید

کی۔ٹوئٹر پر جاری بیان میں فواد چوہدری نے کہا کہ ’مجھے کیوں نکالا‘ سے ’خدا

کیلئے مجھے نکالو‘کا سفراب اختتام کی طرف بڑھ رہا ہے، ایسی لیڈرشپ جب

ووٹ کیلئے عزت مانگتی ہے تو دراصل جمہوری نظام کا مذاق بنتا ہے۔انہوں نے

کہا کہ (ن) لیگ کے ورکرز سے ہمدردی ہے جو نواز شریف کو لیڈر مان کر دن

رات کھجل خراب ہوتے رہے، (ن) لیگ کی قیادت نے اپنے ورکروں کو دغادیا۔

دوسری جانب اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر فواد چوہدری

کا کہنا تھا کہ نواز شریف کا اس طرح جانا معاشرے کی ناکامی کا تاثر گہرا ہوا

ہے، اس فیصلے پر سپریم کورٹ میں اپیل کرنے کے حوالے سے غور کیا جائیگا،

ہفتے کے دن ان کا فیصلہ ہوا جو پیر کو بھی ہو سکتا تھا۔انہوں نے مزید کہاکہ ہم

نواز شریف کی صحت کے لیے دعا گو ہیں مگر جس طرح بھیجا گیا وہ طریقہ کار

غلط ہے، میں سمجھتا ہوں کہ نواز شریف کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ

جانا چاہیے۔ وفاقی وزیر برائے آبی وسائل فیصل واوڈا نے بھی ٹوئٹر پر نواز

شریف پر طنز کرتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب کے بعد ایک بار پھر نواز شریف

ملک سے روانہ ہوگئے۔ وہ سْوٹ پہنے ہشاش بشاش اپنے پاؤں پر جہاز کے اندر

گئے اور دْعاؤں کے بجائے ان پر پھْول برسائے گئے۔فیصل واوڈا نے مزید کہا کہ

‘نواز شریف ایک بار پھر پاکستانی نظام کو انگوٹھا دکھا کر چلتے بنے’۔وفاقی

وزیر برائے امورِ جہاز رانی علی زیدی نے ٹوئٹر پر نواز شریف کی لندن روانگی

کو تنقید کا نشانہ بنایا۔انہوں نے سوال کیا کہ شدید بیمار مریض کو براستہ دوحہ

لندن لے جانے کی کیا منطق ہے جب کہ لاہور سے دوحہ کا سفر 4گھنٹے میں طے

ہوتاہے اور دوحہ تا لندن پہنچنے میں 7 گھنٹے 40 منٹ لگتے ہیں جب کہ لاہور

سے لندن کا براہ راست سفر صرف 7 گھنٹے میں طے ہوجاتاہے۔