Srinager,Kashmiri Protesting against India 42

مقبوضہ وادی میں کرفیوکو106روزمکمل، سابق برطانوی سفارتکارکا بڑا سچ

Spread the love

سرینگر،جموں،سٹٹگارٹ،لندن،اسلام آباد (جتن آن لائن مانیٹرنگ ڈیسک، رپورٹر) مقبوضہ کشمیر، بڑا سچ

مقبوضہ جموں و کشمیرمیں جاری فوجی محاصرے اور مواصلاتی ذرائع کی

معطلی کی وجہ سے آج مسلسل 106 ویں روزبھی علاقے کا باقی دنیا سے رابطہ

منقطع ہے۔ علاقے میں خوراک و ادویات کی شدید قلت جبکہ برفباری سے مظلوم

کشمیریوں کی مشکلات میں مزید اضافہ ہوگیا ہے۔ وہ زندہ رہنے، حصول تعلیم،

صحت اور مذہبی فرائض کی ادائیگی جیسے بنیادی حقوق سے محروم چلے آ

رہے ہیں۔ وادی کشمیر میں انٹرنیٹ اور پری پیڈ موبائل سروسز مسلسل معطل ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : کشمیری خواتین کا ریپ بھارتی فوج کا ہتھیار بن چکا، عارف علوی

بھارت کے تحقیقاتی ادارے انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ نے جنوبی کشمیر میں دو

حریت پسندوں پہلگام کے غلام نبی خان اور ظفر حسین بٹ کے گھروں پر چھاپے

مارے اور انکی املاک ضبط کرلی۔ بھارتی فورسز نے ضلع بارہمولہ میں سوپور

کے دو مختلف علاقوں سے چھاپوں کے دوران پانچ کشمیری نوجوانوں ہلال احمد

میر، ساحل نذیر، پیرزادہ محمد ظہیر، الفت بشیر میر اوراعجاز احمد بٹ کو

گرفتار کرلیا-

دنیا تنازع کشمیر حل کرائے یا بھاری قیمت ادا کرنے کیلئے تیار رہے، سرمارک لیال گرانٹ

جرمنی کے شہر سٹٹگارٹ میں”کشمیرمیں خطرناک انسانی بحران“کے زیرعنوان

ایک سیمینار سے خطاب میں انسانی حقوق کے رہنما Karl-Christian

Hausmann ، ڈاکٹر اسحق، ظفر قریشی اور کشمیر کونسل یورپ کے چیئرمین

علی رضا سید نے کہا بھارت نے مقبوضہ وادی میں زندگی کو قید کررکھا ہے،

اقوام متحدہ میں برطانیہ کے سابق سفیر Sir Mark Lyall Grant نے امریکی

جریدے فوربز میں شائع ہونیوالے ایک مضمون میں خبردار کیا ہے کہ تنازعہ

کشمیر پر پاکستان اور بھارت کے درمیان جنگ کا حقیقی خطرہ موجود ہے۔

عالمی برادری تنازعہ کشمیر کے حل میں مدد کرے یا مستقبل میں جوہری جنگ

کی صورت میں بھاری قیمت ادا کرنے کیلئے تیار رہے۔ پاک بھارت جنگ سے

صرف برطانیہ کو 20 ارب پاﺅنڈ کا نقصان ہوگا۔

اسلام آباد میں بھارت مخالف مظاہرہ، کشمیریوں کو حق خودارادیت دینے کا مطالبہ

اسلام آباد میں مقبوضہ کشمیر میں جاری بھارتی مظالم اور مسلسل فوجی

محاصرے کی مذمت کرتے ہوئے حریت تنظیموں نے پریس کلب کے سامنے

احتجاجی مظاہرہ کیا اوراقوام متحدہ سے اپیل کی کہ وہ کشمیریوں کو انکا ناقابل

تنسیخ حق، حق خودارادیت دلانے کیلئے مداخلت کرے۔

مقبوضہ کشمیر، بڑا سچ