87

حکومت اورجمعیت علما اسلام (ف) میں معاملات طے پا گئے، اعلان جلد متوقع

Spread the love

اسلام آباد(جتن آن لائن خصوصی رپورٹ) حکومت اور جے یو آئی (ف) کے مابین 90 فیصد معاملات طے پاگئے، کل نماز جمعہ پڑھانے کے بعد امیر جمعیت علما اسلام مولانا فضل الرحمن کی جانب سے دھرنا ختم کرنے کا باقاعدہ اعلان کیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں : تمام ملاقاتیں بے نتیجہ،ڈیڈ لاک برقرار ،حکومتی کمیٹی نے مذاکرات کا اختیار پرویز الہٰی کو دیدیا

معتبر ذرائع کے مطابق حکومت سے طے پایا ہے کہ آئند الیکشن میں فوج کی تعیناتی کا فیصلہ حالات کو مدنظر رکھ کر فیصلہ کیا جائیگا، وزیر اعظم عمران خان کے استعفیٰ کا معاملہ الیکشن کمیٹی کے سپرد کر دیا جائیگا، تمام اسیر ارکان اسمبلی کے پروڈکشن آرڈرجاری کرنے، دھرنا ختم ہونے پر کوئی تضحیک آمیز بیان نہ دینے سمیت دیگر ایشوز پر اتفاق ہو گیا۔ معتبر ذرائع کے مطابق چودھری برادران کیساتھ بات چیت کافی حد تک فائنل ہو چکی ہے تاہم کچھ وزراء کی جانب سے غیر ذمہ دارانہ بیانات کی وجہ سے عملی جامہ نہ پہنایا جا سکا۔

پرویز الہٰی کی 24 گھنٹوں میں تین ملاقاتیں، کامیابی کا عندیہ

یاد رہے سپیکر پنجاب اسمبلی اور مسلم لیگ ق کے مرکزی رہنما چوہدری پرویز الہٰی جو کہ حکومت کی مذاکراتی کمیٹی کے بھی ممبر ہیں، انہوں نے گزشتہ 24 گھنٹوں میں مولانا فضل الرحمن اور جے یو آئی کے دیگر رہنمائوں سے تین تفصیلی ملاقاتیں کیں، انہوں نے بھی یہ عندیہ دیا کہ وقت لگے گا مگر کامیابی یقینی ہے- دوسری طرف حکومت کی مذاکراتی کمیٹی جس کے سربراہ وزیر دفاع اور پی ٹی آئی کے رہنما پرویز خٹک ہیں نے بھی تمام تر فیصلوں کا اختیار چوہدری پرویزالہٰی کو تفویض کردیا ہے-

حکومت جے یو آئی