Shutter Down View of Traders in Lahore jtnonline 100

ایف بی آر کیساتھ ڈیڈلاک برقرار، تاجروں کا ملک گیر 2 روزہ ہڑتال کا اعلان

Spread the love

اسلام آباد(جتن آن لائن سٹاف رپورٹر،مانیٹرنگ ڈیسک ) تاجر ہڑتال

آل پاکستان انجمن تاجران اور فیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر) میں ڈیڈ لاک ختم نہ ہوسکا- تاجروں نے کل بروز منگل 29 اوربدھ 30 اکتوبر کو دو روزہ مکمل شٹر ڈاؤن ہڑتال کا اعلان کر دیا۔

یہ بھی پڑھیں: ملک گیر شٹرڈائون ہڑتال ریفرنڈم، حکومت ہوش کے ناخن لے، تاجر برادری

صدر آل پاکستان انجمن تاجران اجمل بلوچ کا اس موقع پر کہنا تھا آئی ایم ایف سے سخت شرائط پرمعاہدے نے کاروبار تباہ کردیا ہے۔ حکومت یہ سمجھے کاروبار نہیں چلے گا تو ٹیکس کہاں سے آئے گا؟- یکم جولائی سے ویسے ہی ملک میں کاروبار کا پہیہ رکا ہوا ہے-

چیئرمین ایف بی آر فکسڈ ٹیکس کا کہہ کر پھر بیان بدل لیتے ہیں

اجمل بلوچ نے کہا چیئرمین ایف بی آر فکسڈ ٹیکس لانے کا کئی مرتبہ کہہ کر 2 گھنٹے بعد بیان % %4 و%ل92BѪ %8B %8%اԱ يک B18վ ىی %لے سے اعلان کردہ تاریخوں 29 اور 30 اکتوبرکو مکمل شٹرڈاون ہڑتال کرینگے۔

15 اکتوبر سے روزانہ ایک گھنٹہ احتجاج کا سلسلہ جاری

تاجرحکومتی معاشی پالیسیوں، ایف بی آر ٹیکسز، خرید و فروخت کیلئے شناختی کارڈ کی شرائط ماننے کو تیار نہیں- تاجر تنظیمیں 15 اکتوبر سے روزانہ ایک گھنٹہ احتجاج بھی کررہی ہیں۔

حکومت ٹیکس نیٹ بڑھانے کیلئے کوشاں، تاجر بداعتمادی کا شکار

حکومت کاروباری طبقہ کی ڈاکومینٹیشن چاہتی تاکہ ٹیکس نیٹ میں لاکر انکی آمدن کے مطابق ٹیکس لے سکے، مملکت کا سسٹم قرضے لئے بغیر چلنے کے قابل ہو سکے، ماضی کی حکومتوں کی غلط پالیسیوں، ایف بی آر افسروں، اہلکاروں کی کرپشن کے باعث تاجر طبقہ بداعتمادی کا شکار ہے-
تاجر ہڑتال