66

سی پیک منصوبوں کی بروقت تکمیل اولین ترجیح،عمران خان

Spread the love

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک )وزیراعظم عمران خان نے بیجنگ میں چینی ہم منصب

سے ملاقات کی،دونوں رہنماؤں کی ون آن ملاقات کے بعد وفود کی سطح پر

ملاقات ہوئی جس میں پاک چین اقتصادی راہداری سمیت دیگر منصوبوں پر تبادلہ

خیال کیا گیا۔چینی وزیراعظم نے پاکستان کے تمام مسائل پر تعاون کا اعادہ کیا

جبکہ سی پیک منصوبے آگے بڑھانے پر عمران خان کا شکریہ ادا کیا،وزیراعظم

عمران خان نے چین کے70ویں قومی دن کی مبارکباد جبکہ چینی وزیراعظم نے

وزیراعظم عمران خان کو سالگرہ کی مبارکباد دی۔منگل کے روز وزیراعظم

عمران خان اور چینی وزیراعظم کے درمیان ہونیوالی ملاقات کا اعلامیہ جاری

کردیاگیا ہے،جس کے مطابق دونوں رہنماؤں کی ملاقات گریٹ ہال بیجنگ میں

ہوئی۔وزیراعظم عمران خان کو گریٹ پیپلزہال آمد پر 19توپوں کی سلامی اور گارڈ

آف آنر پیش کیا گیا۔ ملاقات میں دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کے فروغ سے

متعلق تبادلہ خیال کیا گیا ہے جبکہ چینی وزیراعظم کا پاکستان کے تمام مسائل پر

تعاون کے عزم کا اعادہ اور سی پیک منصوبہ آگے بڑھانے پر وزیراعظم عمران

خان کا شکریہ ادا کیا۔ملاقات میں چینی ہم منصب کا کہنا تھا کہ سی پیک کا دوسرا

مرحلہ پاکستانی معیشت مستحکم کرنے میں معاون ثابت ہوگا اور پاکستان میں

سرمایہ کاری کی نئی راہیں کھولے گا۔دونوں رہنماؤں نے دوطرفہ تجارت بڑھانے

پر تبادلہ خیال کیا۔پاکستانی وفد میں وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر منصوبہ

بندی،وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد،مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد بھی شامل

تھے۔اعلامیے کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ اور ڈی جی آئی ایس

آئی بھی پاکستانی وفد میں شامل تھے۔اعلامیے میں مزید کہا گیا ہے کہ دو طرفہ

مذاکرات کے بعد چینی وزیراعظم نے گریٹ ہال میں ظہرانے کی میزبانی کی۔

وزیراعظم عمران خان نے چین کے 70ویں قومی دن پر مبارکباد پیش کی جبکہ

چینی وزیراعظم نے عمران خان کو ان کی سالگرہ پر مبارکباد دی۔اعلامیے کے

مطابق وزیراعظم عمران خان نے چینی قیادت کو مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم

سے بھی آگاہ کیا۔وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ سی پیک منصوبوں کی بروقت

تکمیل اولین ترجیح ہے۔بیجنگ میں عالمی تجارت کے فروغ کے لیے قائم چینی

کونسل سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ چین نے 400

کرپٹ وزراء کو جیل بھیجا کاش میں بھی چین کی تقلید کرتے ہوئے 500 کرپٹ

لوگوں کو جیل بھیج سکوں۔وزیراعظم عمران خان نے کرپشن کو ملک کی ترقی

میں رکاوٹ کا باعث قرار دیا۔ ہمیں سیکھنے کی ضرورت ہے کہ چین نے لوگوں

کو غربت سے کیسے نکالا ہے، پہلے چین نے پاکستان سے سیکھا اب پاکستان چین

سے سیکھے گا۔انہوں نے کہا کہ صدر شی جن پنگ کرپشن کے خلاف کڑی مہم

چلا رہے ہیں اوریہ اسی کا نتیجہ ہے کہ چین نے کرپشن میں ملوث 400 وزراء کو

جیل میں بھیجا، کاش میں بھی چینی صدر کی تقلید کرتے ہوئے 500 کرپٹ لوگوں

کو جیل بھیج سکوں کیونکہ ملک میں سرمایہ کاری نہ آنے کی سب سے بڑی وجہ

کرپشن ہے۔چین میں کرپشن کیخلاف سخت مہم کو سراہتے ہوئے وزیراعظم عمران

خان کا کہنا تھا کہ چین نے کرپشن کے خلاف کامیابی حاصل کی اور اب چین دنیا

میں تیز ترین ترقی کرنے والا ملک ہے، یہ آئندہ دہائی میں دیگر ممالک کو پیچھے

چھوڑ دے گا۔وزیراعظم نے مزید کہا کہ میں چین کی طرف سے 70 کروڑ افراد

کو غربت سے نکالنے پر بہت متاثر ہوں، چین نے برآمدات کے لیے خصوصی

زونز بنائے اور وہاں سب میرٹ پر کام کرتے ہیں، پاکستان چین کے اس اقدام سے

بہت کچھ سیکھتا ہے