81

اپنا گھر سکیم، کراچی اور پشاور میں پذیرائی حاصل نہ کر سکی

Spread the love

اسلام آباد(جے ٹی این آن لائن سٹاف رپورٹر، ما نیٹرنگ ڈیسک) اپنا گھر سکیم

اپنے گھر کے حصول کی خواہش رکھنے والے ملک بھر کے 12 لاکھ شہریوں

نے وزیراعظم اپنا گھر سکیم میں رجسٹریشن کرا لی۔ جولائی سے جاری مہم

میں نادرا کے ذریعے درخواستیں جمع کرائی گئیں۔ رپورٹ کے مطابق اپنا گھر

سکیم کراچی اور پشاور میں پذیرائی حاصل نہیں کر سکی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: کیا ہاﺅسنگ سوسائٹیاں بنانا فوج کا کام ہے؟ چیف جسٹس پاکستان

رجسٹریشن کرانیوالوں میں لاہور سب سے آگے ہے۔ پشاور اور کراچی سے

صرف 4 فیصد اور بہاولپور میں 5 فیصد افراد نے رجسٹریشن کرائی۔ رجسٹرڈ

ہونے والے 38 فیصد بے گھر مزدور طبقے سے تعلق رکھتے ہیں۔ 24 فیصد

خواتین نے اپنا گھر کے حصول کے لیے درخواستیں دیں۔ 21 فیصد رجسٹرڈ

افراد نجی شعبے میں ملازمت کرتے ہیں۔ اس کے علاوہ ملک بھر سے 12

فیصد سرکاری ملازمین نے اپنا گھر سکیم کے تحت درخواستیں جمع کرائیں۔

رجسٹریشن کرانیوالے 46 فیصد افراد کرائے کے مکانات میں رہتے ہیں۔

یاد رہے وزیر اعظم عمران خان نے اقتدار سنبھالتے ہی قوم سے پہلے خطاب میں

اعلان کیا تھا کہ وہ ملک میں بے گھر افراد کو چھت فراہم کرنے کے لئے 50 لاکھ

گھر تعمیر کرائیں گے، جس سے نہ صرف ملک میں عوام کو گھروں کی کمی سے

نجات ملنے سمیت صنعتی ترقی کے مواقع میسر آئیں گے بلکہ اس کے ساتھ ساتھ

بے روز گاری کے خاتمے میں بھی مدد ملے گی، مگر جاری کردہ حالیہ رپورٹ

سے پتہ چلتا ہے کہ موجود حکومت کی جانب سے تشکیل دیا جانے والا منصوبہ

اپنی خامیوں کی وجہ سے عوام میں مقبولیت حاصل نہیں کر پایا، وزیر اعظم

عمران خان اپنا گھر سکیم پر نظر ثانی کریں اور اسے مزید انتہائی سہل بنائیں تاکہ

بے گھر افراد زیادہ سے زیادہ مستفید ہوسکیں-