70

اٖفغان صدر کی انتخابی ریلی میں خود کش حملہ،26 افراد ہلاک

Spread the love

کابل( مانیٹرنگ ڈیسک ) امریکی سفارتخانے کے قریب اور صوبہ پروان میں

ہونے والے طالبان کے دو حملوں میں 48 افراد ہلاک اور 80 زخمی ہوگئے جبکہ

افغان صدر اشرف غنی بھی بال بال بچ گئے۔رپورٹس کے مطابق دونوں حملوں کی

ذمہ داری طالبان کی جانب سے قبول کرلی گئی ہے۔ پہلا دھماکا افغانستان کے

صوبے پروان میں افغان صدر اشرف غنی کی انتخابی ریلی کے قریب کیا گیا۔افغان

وزارت داخلہ کے ترجمان نصرت رحیمی کے مطابق موٹر سائیکل پر سوار

خودکش بمبار نے ریلی کے قریب چیک پوسٹ پر خود کو دھماکے سے اڑایا جس

میں 26 افراد ہلاک اور 42 زخمی ہوگئے۔ دھماکے میں افغان صدر محفوظ رہے۔

اطلاعات کے مطابق دھماکا اس وقت کیا گیا جب اشرف غنی اپنے کارکنوں سے

خطاب شروع کرچکے تھے۔ دھماکے کے بعد بھی اشرف غنی نے اپنا خطاب

جاری رکھا۔طالبان کا کہنا ہے کہ ان کا ہدف اشرف غنی نہیں بلکہ ریلی کی

سیکیورٹی پر مامور افغان سیکیورٹی اہلکار تھے۔طالبان ترجمان ذبیح اللہ مجاہد کا

کہن اہے کہ ریلی پر حملہ 28 ستمبر کو ہونے والے صدارتی انتخاب کو سبوتاژ

کرنے کیلئے کیا گیا، ہم نے پہلے ہی لوگوں کو خبردار کردیا تھا کہ وہ انتخابی

ریلیوں میں نہ جائیں۔دوسرا دھماکا افغان دارالحکومت کابل میں امریکی سفارت

خانے کے قریب کیا گیا جس میں22 افراد ہلاک اور 38 زخمی ہوگئے۔ طالبان نے

دونوں دھماکوں کی ذمہ داری قبول کی ہے۔خیال رہے کہ طالبان نے حالیہ دنوں

میں حکومت اور غیر ملکی افواج پر حملوں میں اضافہ کردیا ہے اور گزشتہ دنوں

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ان حملوں کو جواز بناتے ہوئے طالبان اور امریکا

کے درمیان دوحا میں جاری امن مذاکرات کو منسوخ کردیا تھا۔دریں اثنا وزیر

خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے افغانستان کے صوبہ پروان میں افغان صدر

اشرف غنی کی ریلی پر ہونے والے دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے

دھماکے کے نتیجے میں ہونے والے جانی نقصان پر گہرے دکھ اور افسوس کا

اظہار کیا۔ انہوں نے کہا معصوم انسانوں کو دہشت گردی کا نشانہ بنانا انتہائی قابل

مذمت ہے۔ مخدوم شاہ محمود قریشی نے جاں بحق ہونے والوں کے لیے مغفرت

جبکہ زخمیوں کے لئے جلد صحت یابی کی دعا کی اور کہا افغانستان میں قیام امن

پورے خطے میں امن و استحکام کے لئے ناگزیر ہے ۔دوسری جانب دفتر خارجہ

نے کہا ہے کہ افغان صدر اشرف غنی کی ریلی پر دہشتگرحملے کی مذمت کرتے

ہیں ، صدر اشرف غنی کی ریلی پر حملے میں24معصوم شہری جاں بحق ہوئے،ہم

اہل خانہ کے ساتھ اظہار ہمدردی کرتے ہیں جبکہ زخمیوں کی جلد صحتیابی کیلئے

دعا گو ہیں، ترجمان دفتر خارجہ نے مزید کہا کہ پاکستان ہر قسم کی دہشتگردی کی

شدید مذمت کرتا ہے اور پاکستان افغانستان میں قیام امن کی مکمل حمایت کرتا ہے ۔

کابل حملے